بجلی کی وزارت

یو کے  نےگرین ہائیڈروجن سے متعلق بھارت کے ساتھ تعاون کرنے کی خواہش ظاہر کی

بجلی اور جدید اور قابل تجدید توانائی کے مرکزی وزیر جناب آر کے سنگھ  سی او پی 26 کے صدر جناب آلوک شرما سے ملاقات کی

بھارت نے گرین ہائیڈروجن اور لیتھیئم -آئن کے لئے آئندہ بولیوں میں حصہ لینے کے لئے یو کے کو مدعو کیا

بجلی کے وزیر نے ماورائے ساحل  ہوا سے متعلق  یو کے کے ساتھ تعاون کرنے کی بھارت کی خواہش ظاہر کی

Posted On: 17 AUG 2021 4:04PM by PIB Delhi

       

بھارت نے مارچ ،2021 تک 16369 میگاواٹ کی انیفیشئنٹ تھرمل یونٹز کا آپریشن پہلے ہی بند کردیا ہے۔ بجلی اور تجدید اور قابل تجدید توانائی کے مرکزی وزیر جناب آر کے سنگھ نے آج یہاں سی او پی 26 کے صدر جناب آلوک شرما کے ساتھ ہوئی میٹنگ میں یہ بات کہی۔ سی او پی 26 کے صدر نے میٹنگ میں کوئلہ پر مبنی بجلی  پلانٹوں کو مرحلہ وار طریقہ سے بند کرنے کے معاملے کو بھی اٹھایا۔ میٹنگ میں بجلی کے سکریٹری ، ایم این آر ای کےسکریٹری اور ہندوستان میں یو کے  کے ہائی کمشنر بھی موجود تھے۔

 

https://static.pib.gov.in/WriteReadData/userfiles/image/image001B6VP.jpg

 

عزت مآب  آلوک شرما نے گرین ہائیڈورجن کے سلسلے میں  بھارت کے ساتھ شراکت داری  کے لئے یو کے  کے تعاون کی خواہش ظاہر کی۔

یو کے نے ایک کامیاب سی او پی 26 کے انعقاد کے لئے بھارت کی حمایت کی درخواست کی۔

 

https://static.pib.gov.in/WriteReadData/userfiles/image/image002LF2X.jpg

 

بجلی کے وزیر نے ماورائے ساحل  ہوا سے متعلق  یو کے کے ساتھ تعاون کرنے کی بھارت کی خواہش ظاہر کی ۔انہوں نے ترقی یافتہ اور ترقی پذیر ممالک کو اسٹوریج کی لاگت کو کم کرنے کے لیے مل کر کام کرنے کی ضرورت پر بھی زور دیا۔ انہوں نے وفد کو بتایا کہ  بھارت واحد جی 20 ملک ہے جس کے کام پیرس معاہدے کے تحت ان کے ذریعہ طے شدہ  این ڈی سی کے مطابق ہیں۔

میٹنگ کے دوران 2030 تک 450 گیگاواٹ انسٹالڈقابل تجدید صلاحیت حاصل کرنے اور بھارت کے حوصلہ مندانہ ہدف کے مدنظر اسٹوریج صلاحیت بڑھانے کی ضرورت پر بھی بات چیت کی گئی ہے۔ گرین ہائیڈروجن اور لیتھیئم-آئن کے لئے آئندہ بولی میں حصہ لینے کے لئے یو کے کو بھی مدعو کیا گیا ۔

************

 

ش ح۔ف ا  ۔ م ص

 (U: 7962)



(Release ID: 1746786) Visitor Counter : 40