کابینہ

کابینہ نے بجلی کے سیکٹر میں باہمی مفاد کے شعبوں میں معلومات کے تبادلے کے لئے بھارت اور امریکہ کے درمیان مفاہمت نامے کو منظوری دی

Posted On: 16 DEC 2020 3:31PM by PIB Delhi

 

نئی دلّی ، 16 دسمبر / وزیر اعظم جناب نریندر مودی کی صدارت میں مرکزی  کابینہ نے بھارت کے سینٹرل الیکٹریسٹی   ریگولیٹری کمیشن ( سی ای آر سی ) اور امریکہ کے فیڈرل اینرجی ریگولیٹری کمیشن ( ایف ای آر سی ) کے درمیان بجلی کے سیکٹر میں  باہمی مفاد کے شعبوں میں معلومات اور تجربات کے تبادلے کے لئے  ایک مفاہمت نامے  کی تجویز  کو اپنی منظوری دے دی ہے ۔

          یہ مفاہمت نامہ  تھوک بجلی مارکیٹ  کے موثر فروغ  اور گرڈ کی  بھروسہ مندی کو بڑھانے کے لئے ریگولیٹری اور پالیسی فریم ورک کو بہتر بنانے میں مدد کرے گا ۔

ایم او یو کے تحت مندرجہ ذیل سرگرمیاں انجام دی جائیں گی :

  1. باہمی مفاد کے شعبوں میں  معلومات اور ریگو لیٹری عمل کے تبادلے کے لئے توانائی سے متعلق  امور کی نشاندہی اور موضوعات اور امکانی ایجنڈا تیار کرنا ۔
  2. ایک دوسرے کی تنصیبات میں کمشنروں  اور  / یا عملے کی شرکت کے لئے دوروں کا اہتمام کرنا ۔
  3. سیمیناروں ، دوروں اور تبادلوں میں شرکت ۔
  4. باہمی مفاد کے پروگرام مرتب کرنا اور جہاں مناسب ہو ، ایسے پروگراموں کو منعقد کرکے مقامی شرکت  کو بڑھاوا دینا ۔
  5. جہاں باہمی مفاد اور عملی طور پر ممکن ہو ، مقررین کو  توانائی کے معاملات اور دیگر بندوبست  یا تکنیکی امور پر  بولنے کا موقع فراہم کرنا ۔

 

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ ۔ ۔ ۔ ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ ۔ ۔ ۔۔۔ ۔۔۔۔۔۔۔۔

( م ن ۔ و ا ۔ ع ا ۔ 

U. No. 8137

 



(Release ID: 1681190) Visitor Counter : 9