ارضیاتی سائنس کی وزارت

بھارت کی مستقبل کی ترقی کا دارومدار سائنس پر مبنی معیشت پر ہے،مرکزی وزیر ڈاکٹر جتیندر سنگھ کا بیان


ارضیاسی سائنسیز کی وزارت کی جانب سے منعقد کرد ہ آزادی کا امرت مہوتسو ہفتہ کا افتتاح کیا گیا


اگلے 25 سال میں ہندوستان کی شمولیت والی ترقی کے لئے سائنس و ٹکنالوجی کااہم رول ہوگا

سودیسی اسٹارٹ اپس ہندوستان کی نیوی معیشت میں کلیدی رول ادا کریں گی:ڈاکٹر جتیندر سنگھ

Posted On: 18 OCT 2021 1:06PM by PIB Delhi

سائنس اور ٹکنالوجی  کے مرکزی وزیر مملکت آزادانہ چارج، ارضیاتی سائنسز، وزیراعظم کے دفتر، عملے عوامی شکایات، پنشن و ایٹمی توانائی اور خلا کے وزیرمملکت (آزادانہ چارج) ڈاکٹر جتیندر سنگھ نے آج یہاں کہاکہ  ہندوستان کے مستقبل کی ترقی کا دارومدار سائنس پر مبنی معیشت پر ہے

ارضیاتی سائنسز کی وزارت کی جانب سے منعقد کردہ آزادی کا امرت مہوتسو کے افتتاحی اجلاس میں بحری معیشت میں ریسرچ ٹکنالوجی اور  اسٹارٹ اپس کے رول پر ایک انٹرایکٹو اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے ڈاکٹر جتیندر سنگھ نے کہاکہ وزیراعظم جناب نریندر  مودی کی قیادت میں ہندوستان آزادی کی 75 ویں سالگرہ منارہا ہے۔ یہ ایک موقع ہی ہے کہ اس احساس  اور بیداری کے ساتھ اگلے 25 سال سے اس طرح کا ایک منصوبہ بنایا جاجائے کہ بھارت کی شمولیت والی ترقی کے لئے سائنس اور ٹکنالوجی کااصل رول ہے۔

1.jpg

 

ڈاکٹر جتیندرسنگھ نے کہاکہ وزیراعظم نریندر مودی کے ویژن اور دنیا کے سب سے مقبول لیڈر کی حیثیت سے ان کی قداور شخصیت نے بھارت کو ایک غیر معمولی عزت و وقار عطا کیا ہے جو کہ اس سے پہلے کی دہائیوں میں دیکھنے میں نہیں آیا۔ وزیراعظم جناب نریندر مودی  سائنس پر مبنی ترقی کے تئیں ایک خاص رجحان رکھتے ہیں۔  بھارت کی معیشت  قومی معیشت کا ایک  موضوع سمجھی جاتی ہے جومکمل بحری وسائل نظام اور انسان کے ذریعہ وضع کئے گئے اقتصادی بحری ڈھانچے پر مشتمل ہے اورساتھ ہی ساتھ ساحلی سمندر پر واقع ساحلی زونوں اور ملک کے قانونی دائرہ اختیار سے بھی متعلق ہے۔ انہوں نے کہا کہ ساز و سامان اور خدمات میں یہ معاون ثابت ہوتی ہے کیوں کہ یہ ساز و سامان اقتصادی نموو ماحولیاتی ہمہ گیریت اور قومی سلامتی سے مربوط ہوتے ہیں۔  نیلی معیشت ایک وسیع سماجی و اقتصادی موقع ہے جو بھارت جیسے ساحلی علاقے کے حامل ممالک کےلئے دستیاب ہے اور وہ اس کا استعمال سماجی فائدے کے لئے کرسکتے ہیں اور سمندری وسائل کو بروئے کار لا سکتے ہیں۔

ارضیاتی سائنس کا ذکر کرتے ہوئے وزیر موصوف نے کہاکہ اس میں زمین کا ماحول اور سطح کے اوپر اوراس کے نیچے بہنے و الا پانی کے ساتھ ساتھ زمین کے سمندر اور اوشن بھی شامل ہیں۔ انہوں نے کہاکہ ہندوستان کے سمندر ہمارے لئے خزانہ ہیں اس لئے وزیراعظم جناب نریندر مودی حکومت کی جانب سے شروع کیا گیا دیپ مشن اوشن نیوی معیشت کو مالا مال کرنے  کے لئے مختلف وسائل سے فائدہ اٹھانے کاموقع فراہم کرتا ہے۔

 

2.jpg

 

مختلف طبقوں  کے شراکت داروں تک پہنچنے کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے ڈاکٹر جتیندرسنگھ نے  یاد دلایا کہ صنعت کو جوڑنا آزادی کا امرت مہوتسو کاایک موضوع ہے۔انہوں نے کہاکہ اس لئے یہ بہت ضروری ہے کہ اس بات کو یقینی بنایاجائے کہ اسٹارٹ اپس یا سودیسی اسٹارٹ اپس کی سرگرمی سے آج کے پروگرام میں شامل ہوں۔

سائنسی اور قدرتی وسائل کے ساتھ ڈاکٹر جتیندرسنگھ نے کہاکہ ارضیاتی سائنس کی وزارت عام آدمی کی مختلف ضرورتوں کو پورا کررہی ہے۔ آنے والے وقت میں وزیرموصوف نے کہاکہ بحری کثافت ایک چینج پیدا کرنے  جارہی ہے ۔ انہوں نے کہاکہ ارضیاتی سا ئنس کی وزارت نے پانڈیچری کے ساحل سے ایک اختراعی ٹکنالوجی تیار کی ہے ۔

اس سے پہلے  ارضیاتی سا ئنس کی وزارت سے نئے مقرر کردہ سکریٹری  ڈاکٹر ایم روی چندرن نے  خیرمقدمی اجلاس سے خطاب کیااور ڈاکٹر نیلو تھرے نے پروگرام کے موضوع سے متعارف کرایا۔

****************

 

(ش ح۔س ک۔ف ر)

U No. 11067



(Release ID: 1764653) Visitor Counter : 387