PIB Headquarters
azadi ka amrit mahotsav

پی آئی بی کاکووڈ-19 بلیٹن

Posted On: 20 MAY 2022 6:05PM by PIB Delhi

https://static.pib.gov.in/WriteReadData/userfiles/image/image0020FX3.png

https://static.pib.gov.in/WriteReadData/userfiles/image/image001BPSF.jpg

 

ملک گیر ٹیکہ کاری مہم کے تحت اب تک 191.96 کروڑ ٹیکے لگائے جاچکے ہیں

سردست بھارت میں زیر علاج مریضوں کی تعداد 15,044 ہے

زیر علاج مریضوں کی شرح فی الحال 0.03 فیصد ہے

شفایابی کی شرح فی الحال98.75 فیصد ہے

گذشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 2,614 مریض رو بہ صحت ہوئے ہیں،شفایاب ہونے والے مریضوں کی کل تعداد بڑھ کر 4,25,92,455 ہوگئی ہے

گزشتہ 24 گھنٹے میں 2,259 نئے معاملے درج کئے گئے ہیں

متاثرہ مریضوں کی یومیہ شرح (0.50 فیصد) ہے

اسی طرح متاثرہ مریضوں کی ہفتہ واری شرح (0.53 فیصد)ہے

مجموعی طور پر اب تک 84.58 کروڑ ٹیسٹ کئے جاچکے ہیں؛ گذشتہ 24 گھنٹوں میں 4,51,179 ٹیسٹ کئے گئے

 

Image

Image

بھارت میں کووڈ-19 ٹیکہ کاری کی مجموعی تعداد 191.96کروڑسے تجاوزکرگئی
12سے14سال کے نو عمر افراد کو 3.24 کروڑ سے زیادہ ٹیکے لگائے گئے ہیں
بھارت میں سردست 15,044مریض زیر علاج ہیں
گذشتہ 24 گھنٹوں میں 2,259 نئے معاملات درج کئے گئے
سردست شفایابی کی شرح 98.75 فیصد ہے
متاثرہ پائے جانے والے مریضوں کی ہفتہ واری شرح 0.53 فیصد ہے

آج صبح 7 بجے تک موصولہ عبوری رپورٹ کے مطابق بھارت میں کووڈ-19ٹیکہ کاری کی مجموعی تعداد 191.96کروڑ (1,91,96,32,518) سے تجاوز کر گئی ہے۔ ملک بھر میں 2,41,17,166 سیشنز کا انعقاد کرکے یہ حصولیابی حاصل کی گئی۔

12سے 14سال کے نوعمرنوجوانوں میں کووڈ-19 ٹیکہ کاری کا آغاز 16 مارچ 2022 سے کیا گیا ہے۔ اس عمر کے بچوں کو اب تک 3.24 کروڑ سے زیادہ (3,24,75,018) کووڈ -19 سے بچاؤ کا پہلا ٹیکہ لگایا جاچکا ہے۔ اسی طرح، 18 سے 59 سال کی عمر کے افراد کو احتیاطی خوراک کا ٹیکہ لگانے کا آغاز 10 اپریل 2022 سے کیا گیا۔

آج صبح 7 بجے تک حاصل عبوری رپورٹ درج ذیل کے مطابق ہے:

 

 

ٹیکہ کاری کی مجموعی کوریج

طبی کارکنان

پہلی خوراک

1,04,06,359

دوسری خوراک

1,00,32,661

احتیاطی خورک

50,77,626

صف اوّل کے کارکنان

پہلی خوراک

1,84,18,020

دوسری خوراک

1,75,70,727

احتیاطی خورک

83,02,533

12 سے 14 سال کی عمر کےنوعمر بچے

پہلی خوراک

3,24,75,018

دوسری خوراک

1,33,64,363

15 سے 18 سال کی عمر کے نوجوان

پہلی خوراک

5,91,09,660

دوسری خوراک

4,45,34,980

18 سے 44 سال کی عمر کے افراد

پہلی خوراک

55,67,63,388

دوسری خوراک

48,63,52,174

احتیاطی خوراک

5,16,058

45 سے 59 سال کی عمر کے افراد

پہلی خوراک

20,31,78,740

دوسری خوراک

19,00,08,329

احتیاطی خوراک

11,12,877

60 سال سے زیادہ عمر کے افراد

پہلی خوراک

12,70,39,365

دوسری خوراک

11,84,58,135

احتیاطی خوراک

1,69,11,505

احتیاطی خوراک

3,19,20,599

میزان

1,91,96,32,518

 

 

 

سردست ملک بھر میں زیر علاج مریضوں کی تعداد 15,044ہے ۔ زیر علاج مریضوں کی تعداد ملک بھرکے مجموعی متاثرہ معاملوں کا 0.03 فیصد ہیں ۔

 

https://static.pib.gov.in/WriteReadData/userfiles/image/image002ULHS.jpg

نتیجتاً ­­­­­­ شفایابی کی شرح 98.75 فیصد ہوگئی ہے۔ پچھلے 24 گھنٹے میں 2,614 مریض روبہ صحت ہوئے ہیں۔ اس کے ساتھ ہی (عالمی وباپھوٹ پڑنے کے بعد سے )  اب تک شفایاب ہونے والوں کی مجموعی تعداد 4,25,92,455 ہوگئی ہے۔

 

https://static.pib.gov.in/WriteReadData/userfiles/image/image003T8HI.jpg

 

گزشتہ 24 گھنٹے کے دورا ن 2,259 نئے معاملے درج ہوئے ہیں۔

 

https://static.pib.gov.in/WriteReadData/userfiles/image/image0046MJO.jpg

 

گذشتہ 24 گھنٹے میں مجموعی طور پر 4,51,179 کووڈ-19 کے نمونوں کی جانچ کی گئی ۔ بھارت میں اب تک مجموعی طور پر 84.58 کروڑ (84,58,55,351) سے زیادہ نمونوں کی جانچ کی جاچکی ہے۔

ملک بھر میں سردست متاثرپائے جانےوالےافراد کی ہفتہ وار شرح سردست 0.53 فیصد ہوگئی ہےاور ایک دن میں جانچ کے بعد متاثر پائےجانے والے افراد کی شرح 0.50 فیصد ہے۔

 

https://static.pib.gov.in/WriteReadData/userfiles/image/image005F5N0.jpg

 

https://www.pib.gov.in/PressReleasePage.aspx?PRID=1826800

 

ریاستوں/ مرکز کے زیر انتظام علاقوں میں کووڈ-19 خوراک کی دستیابی سے متعلق تازہ ترین معلومات
ریاستوں/ مرکز کے زیر انتظام علاقوں کو 193.53کروڑ سے زیادہ ویکسین کی خوراکیں فراہم کی گئی ہیں
ریاستوں/مرکز کے زیر انتظام علاقوں کے پاس اب بھی 16.72کروڑسے زیادہ غیر استعمال شدہ خوراکیں دستیاب ہیں، جن کا استعمال کیا جانا ہے۔

 

مرکزی حکومت پورے ملک میں کووڈ-19 ٹیکہ کاری کی رفتار کو تیز کرنے اور اس کے دائرہ کار میں وسعت لانے کے لئے پابند عہد ہے۔ ملک بھر میں کووڈ 19 ٹیکہ کا ری کا آغاز 16 جنوری 2021 کو کیا گیا تھا۔ کووڈ 19 ٹیکہ کاری کے ہمہ گیر نئےمرحلے یعنی سب کو ویکسین کا آغاز21 جون 2021 کو کیا گیاتھا۔ ویکسین کی مزید دستیابی کے ذریعے ٹیکہ کاری مہم کی رفتارمیں اضافہ کردیا گیا ہے، ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں کو بہتر منصوبہ بندی کے ذریعے ویکسین کی پیشگی دستیابی کو یقینی بنایا گیا ہے اور سپلائی چین کو آسان بنایا گیا ہے۔

ملک گیر ٹیکہ کاری مہم کے حصے کے طور پر بھارتی حکومت، ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں کوکووڈ ویکسین مفت دستیاب کراکے ، ان کی مدد کررہی ہے۔ کووڈ -19 ٹیکہ کاری مہم کے ہمہ گیر یعنی سب کو ویکسین کے نئے مرحلے میں، مرکزی حکومت ملک میں ویکسین مینو فیکچررز کے ذریعے تیار کی جارہی ویکسین کی 75 فیصدخریداری اور سپلائی (فری آف کاسٹ) ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں کو فراہم کرا رہی ہے۔

 

ویکسین کی خوراک

(20 مئی 2022 تک)

­­­سپلائی کی گئیں خوراک

1,93,53,58,865

دستیاب خوراک

16,72,85,910

­­­­­­­­

 

­­­­­­­­بھارت سرکار (فری آف کاسٹ چینل) اور ریاستی سرکارکے ذریعےبراہ رست خریداری زمرے کے تحت ریاستوں و مرکز کے زیر انتظام علاقوں کو 193.53کروڑ سے زیادہ (1,93,53,58,865) ٹیکےفراہم کرائے جاچکے ہیں۔

ریاستوں/ مرکز کے زیر انتظام علاقوں کے پاس ابھی 16.72کروڑ سے زیادہ (16,72,85,910) غیر استعمال شدہ ٹیکے دستیاب ہیں، جنہیں استعمال میں لایا جانا باقی ہے۔

 

https://www.pib.gov.in/PressReleasePage.aspx?PRID=1826794

 

وزارت صحت نے کچھ ریاستوں/مرکز کے زیر انتظام علاقوں میں کووڈ 19 ٹیکہ کاری میں کافی کمی آنے کی طرف اشارہ کیا
کووڈ ٹیکہ کاری کی رفتار بڑھانے اور تمام اہل مستفیدین کو ٹیکہ لگانے کے لیے جون سے شروع کرکے اگلے دو مہینے تک ’’ہر گھر دستک 2.0‘‘ مہم چلائی جائے گی
ٹیکہ کاری کے مراکز یا ریاستی حکومت کو چاہیے کہ وہ ایسے مستفیدین کو احتیاطی خوراک کے لیے کسی غیر ملکی سفر سے متعلق دستاویز نہ مانگیں
ریاستوں/مرکز کے زیر انتظام علاقوں سے کووڈ 19 ویکسین کو ضائع ہونے سے روکنے کے لیے کہا گیا؛ ’’فرسٹ ایکسپائری فرسٹ آؤٹ‘‘ کا اصول اپنائیں

صحت کی مرکزی وزارت نے تمام ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں میں کووڈ 19 ٹیکہ کاری کی رفتار میں کافی کمی آنے پر تشویش کااظہار کیا ہے، اور ان سے درخواست کی ہے کہ وہ تمام اہل مستفیدین کو مکمل طور پر ٹیکہ لگانے کی رفتار میں تیزی لائیں۔ یہ پیغام مرکزی ہیلتھ سکریٹری نے آج ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں کے ہیلتھ سکریٹریز اور این ایچ ایم ایم ڈی کے ساتھ ویڈیو کانفرنس کے ذریعہ کووڈ ٹیکہ کاری کی صورتحال کا جائزہ لیتے وقت تمام ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں تک پہنچایا۔

https://static.pib.gov.in/WriteReadData/userfiles/image/image003AA6E.png  https://static.pib.gov.in/WriteReadData/userfiles/image/image00279B3.png

 

 

پورےملک میں کووڈ 19 ٹیکہ کاری کی حالیہ سست رفتار کو تیز کرنے کے لیے ’مشن موڈ‘ میں کام کرنے کی فوری ضرورت پر زور دیتے ہوئے، مرکزی ہیلتھ سکریٹری نے انہیں جون-جولائی کے دوران ضلع، بلاک اور گاؤں کی سطحوں پر تفصیلی پلان کے ساتھ دو مہینے تک ’’ہر گھر دستک‘‘ مہم 2.0 شروع کرنے کا مشورہ دیا۔ ’ہر گھر دستک 2.0‘ ابھیان کا مقصد پہلی، دوسری اور احتیاطی خوراکوں والی اہل آبادی کو گھر گھر جا کر ٹیکہ لگانا ہے۔ان سے یہ بھی اپیل کی گئی کہ 18 سے 59 سال والے ایج گروپ کو احتیاطی خوراک لگانے میں مستقل طور پر پرائیویٹ اسپتالوں کے ساتھ جائزہ لیں ۔

تفصیلات کے لئے: https://pib.gov.in/PressReleasePage.aspx?PRID=1826907

 

 

Twitts

 

*******************

ش ح ۔اک   ۔   م ش

U.N. 5932



(Release ID: 1829698) Visitor Counter : 36


Read this release in: English , Hindi , Marathi , Manipuri