سائنس اور ٹیکنالوجی کی وزارت
azadi ka amrit mahotsav

مرکزی وزیر ڈاکٹر جتیندر سنگھ نے  بتایا،وبائی امراض سے نمٹنےکے لئے ریلوے کوچوں،  اے سی بسوں،بند جگہوں وغیرہ میں سی ایس آئی آر کی نئی فروخت شدہ جراثیم کش  ٹکنالوجی قائم کی جارہی ہے

ریلوے، پارلیمنٹ ہاؤس   اور اے سی بسوں میں یو وی سی –سی جراثیم کش ٹکنالوجی کے  کامیابی تجربوں کے بعد یہ اب عام عوام کے استعمال کے لئے سرکاری طور پر دستیاب ہے

سی ایس آئی آر -سی ایس آئی او(مرکزی سائنسی آلات تنظیم)  کے توسط سے سائنس اورٹیکنالوجی کی وزارت کے ذریعہ   فروغ دی گئی یو وی –سی ٹکنالوجی  سارس-سی او وی-2 کے  ہوا میں پھیلنے  کو کم کرنے کے لئے  مکمل طور پر موثر ہے اور یہ کووڈ-دورانیہ کے بعد بھی کام کرے گی

ڈاکٹر جتیندر سنگھ نے  سارس-سی او وی-2 کے پھیلاو کے جراثیم کش ٹکنالوجیوں پر  سی ایس آئی آر رہنما خطو جاری کئے

سی ایس آئی آر جسمانی  (فزیکل) ریلیوں پر پابندی کےمدنظر پانچ ریاستوں میں آئندہ اسمبلی   عام انتخاب   کے دوران محدود صلاحیت کے ساتھ  انڈور میٹنگوں میں  ٹکنالوجی کے استعمال کے لئےانتخابی کمیشن کو لکھے گا: ڈاکٹر جتیندر سنگھ

Posted On: 17 JAN 2022 5:32PM by PIB Delhi

نئی دہلی، 17جنوری /2022 سائنس اورٹکنالوجی کے مرکزی وزیر ارتھ سائنس  کے وزیر مملکت  (آزادانہ چارج) پی ایم  او ، عملے ، عوامی شکایات، پنشن ، ایٹمی توانائی اور خلا کے  وزیر مملکت  ڈاکٹر جتیندر سنگھ نے آج یہاں کہا کہ  وبا سے نمٹنے کے لئے  ریلوے کوچوں ، اے سی بسوں۔ بند جگہوں وغیرہ میں سی ایس آئی آر کی نئی فروخت کردہ جراثیم کشن  لگائی جارہی ہے۔

 

ڈاکٹر جتیندر سنگھ بتایاکہ سی ایس  آر، سی ایس آئی او(مرکزی سائنسی آلات تنظیم)  کے توسط سے  سائنس اور ٹکنالوجی کی وزارت کے ذریعہ  فروخت کردہ یووی-سی  ٹکنالوجیز  سارس –سی او وی -2کے ہوا میں پھیلنے کو  کم کرنے کے لئے  پوری طرح سے موثر ہے اور کووڈ دورانیہ کے بعد بھی کارگر  رہی گی۔ انہوں  نے کہا ریلوے، اے سی بسوںا ور یہاں تک یہ پارلیمنٹ ہاؤس میں اس کا  کامیابی  کے ساتھ تجربہ کیا گیا ہےاور اب یہ عوام کے استعمال کے لئے سرکاری طور پر دستیاب ہے۔

ڈاکٹر جتیندر سنگھ سارس-سی او وی  کے پھیلاؤکو کرنے کے لئے جراثیم ٹکنالوجی پر  خطوط جاری کے بعد گفتگو کررہے تھے۔ حالانکہ   ڈاکٹر جتیندرنے آگاہ کیا کہ اس جراثیم کش ٹیکنالوجی کے قیام کے بعد بھی ، تمام لوگوں کو  کووڈ کے مطابق  برتاؤکی سختی سے تعمیل کرنے کا مشورہ دیا جاتاہے،جس میں فیس ماسک کا استعمال ، سماجی فاصلہ قائم رکھنا، بھیڑ بھاڑ سے دور رہنا وغیرہ  شامل ہیں۔

ڈاکٹر جتیندر سنگھ نے کہاکہ ضروری ہوا میں پھیلنے کی تدابیر، ضروری تحفظ اور استعمال کرنے والو ں کے لئے   رہنما خطوط مزید پرکھے  گئے حیاتیاتی تحفظ معیارت وغیرہ کے ساتھ ایروسول میں شامل  سارس-سی او وی -2 وائرس کو  بےکار کرنےکے لئے ٹکنالوجی کو فروغ دیا گیا ہے۔ یو وی سی 254 این ایم یو وی  لائٹ کا استعمال کرکے مناسب خوراک کے ساتھ وائرس، بیکٹریا، فنگس اوردیگر بائیو ایروسول وغیرہ کو بیکار کردیتا ہے۔

ڈاکٹر جتیندرسنگھ نے کہاکہ ایک مقررہ  مدت کےلئے  حقیقی ریلیوں اور روڈ شو پر  پابندی کے مدنظر پانچ ریاستوں میں آئندہ اسمبلی انتخابات کے لئے محدود صلاحیت کے ساتھ کمروں کے اندر میٹنگوں کے دوران  اس ٹکنالوجی کے استعمال کے لئے سی ایس آئی آر  ہندستانی انتخابی کمیشن  کو لکھے گا۔ انہوں نے کہاکہ   یو وی سی پروڈکٹ ، جراثیم کش  نظام کا استعمال  بڑے آڈیوٹوریم، بڑے کانفرنس کمروں ، کلاس روم  وغیرہ میں کیا جاسکتاہے جو موجودہ وبا میں انڈور سرگرمیوں کے  لئے نسبتاً  محفوظ ماحول پیش کرتا ہے۔

انتخابی کمیشن نے حال ہی میں انتخابات کے دوران ماڈل کنڈکٹ  اور کووڈ پروٹوکول کی  تعمیل کرتے ہوئے 300 افراد کی زیادہ سے زیادہ صلاحیت  یا ہال یا آڈیوٹوریم کے  50 فی صد صلاحیت  کے ساتھ  انڈور میٹنگس کی اجازت دی ہے۔

 ڈاکٹر جتیندر سنگھ نے بتایا کہ  سارس-سی او وی -2 کے ہوا میں پھیلنے کو  کم کرنے کے لئے بنائی گئی  ٹکنالوجی کو  پارلیمنٹ کے  مانسون اجلاس سے قبل گزشتہ سال  جولائی میں  سینٹرل ہال، لوک سبھا  کمروں اورکمیٹی روم 62 اور 63 میں قائم کیا گیا تھا۔ ڈاکٹر سنگھ نے کہا کہ  وہ  آئندہ بجٹ اجلاس سے قبل  راجیہ سبھا کے چیف سکریٹری کو اس ٹکنالوجی کے قیام کے لئے خط لکھیں گے۔

ڈاکٹر جتیندر سنگھ نے سائنسی کھوج میں سی ایس آر کی وراثت کا ذکر کیا اور  سائنس کے مختلف شعبوں کی  تنظیموں/اداروں کے ذریعہ عام آدمی کی روز مرہ  کی زندگی کو آسان بنانے میں نبھائے گئے رول کو   اجاگر کرنے کی اپیل کی۔  انہوں نے کہاکہ سی ایس آئی آر کو سائنس اورٹکنالوجی کے شعبے میں ایک اور مثالی مقام حاصل ہے۔

ہاؤسنگ اور شہر امور کی وزارت  کے سکریٹری جناب منوج جوشی نے اس موقع پر  کہا کہ  سی پی ڈبلیو ڈی  سرکاری  اور پرائیوٹ  عمارتوں میں   یو وی –سی اے ڈکٹ  جراثیم کش نظام کی وسیع تشہیر اور اسے اپنانے کے لئے  سی ایس آئی آر کے ساتھ  کام کرے گا۔

ریلوے بورڈ کے کارگذار ڈائریکٹر  اے کے ملہوترا نے بتایا کہ  یو وی سی  جراثیم کش ٹکنالوجی کا  ایک مہینے کے  لئے باندرہ سے چندی گڑھ تک  ایک ہزار کلو میٹر کے فاصلے کی ریل گاڑیوں ڈبوں میں  کامیابی کےساتھ تجربہ کیا گیا ہے۔

سڑک نقل و حمل  اور شاہراہوں کے جوائنٹ سکریٹری جناب امت وردان نےبتایا کہ اترپردیش  ریاستی  سڑک  نقل و حمل کارپوریشن  (یو پی ایس آر ٹی سی) کی اے سی بسوں میں  یو وی تکنیک کا کامیابی کے ساتھ استعمال کیا گیا تھا۔ انہوں نے بتایاکہ انکی وزارت  تمام مسافر  گاڑیوں میں  اسے لگانے کے لئے  پرجوش ہے۔

ڈی جی، سی ایس آئی آر  ، جناب شیکھر سی مانڈے، ڈاکٹر راجیش گوکھلے  اور ملک بھر میں  واقع سی ایس آئی آر کی  تجربہ گاہوں  کے اعلی حکام ہائبرڈ موڈ  موڈ سے اس پروگرام میں شامل ہوئے۔

******

ش ح۔   ش ت۔ج

Uno—485



(Release ID: 1790647) Visitor Counter : 76