شماریات اور پروگرام کے نفاذ کی وزارت

سال 24-2023 کی پہلی سہ ماہی (اپریل تا جون) کے لیے مجموعی گھریلو پیداوار کے تخمینے

Posted On: 31 AUG 2023 5:30PM by PIB Delhi

شماریات اور پروگرام کے نفاذ کی وزارت  کے قومی شماریات کا دفتر (این ایس او) اس پریس نوٹ میں،سال 24-2023 کی پہلی سہ ماہی (اپریل تا جون) کے لئے، مستقل (2011-12) اور موجودہ قیمتوں، دونوں پرمجموعی گھریلو پیدوار  کےتخمینے جاری کررہا ہے۔

2. سال 22-2021، 23-2022 اور24-2023  کے لئے مسلسل (2011-12) اور موجودہ قیمتوں سے متعلق  معاشی سرگرمیوں کی اقسام  اور جی ڈی پی کے اخراجات کے اجزاء کے لحاظ سے،بیانات 1 سے 4 میں بنیادی قیمتوں پر مجموعی اقداری  اضافے  (جی وی اے ) کا سہ ماہی تخمینہ دیا گیا ہے۔

3. حقیقی جی ڈی پی یا مستقل جی ڈی پی (12-2011)، 2023-24کی  پہلی سہ ماہی   میں قیمتیں  40.37 لاکھ کروڑ روپے کی سطح تک پہنچنے کا تخمینہ ہے، جو کہ 2022-23   کی پہلی سہ ماہی میں  37.44 لاکھ کروڑ روپے کی، جوکہ 2022-23 کی  پہلی سہ ماہی  میں 13.1 فیصد کے مقابلے میں 7.8فیصدکی شرح نمو ظاہر کرتی ہے۔

4. 2023-24 کی پہلی سہ ماہی میں موجودہ قیمتوں پر برائے نام جی ڈی پی  یا جی ڈی پی  کا تخمینہ70.67 لاکھ کروڑروپے  کا  لگایا گیا ہے، جو کہ 2022-23 کی  پہلی سہ ماہی میں  65.42 لاکھ کروڑ روپے کا تھا  ، جو کہ 2022-23  کی  پہلی سہ ماہی میں   27.7 فیصد کے مقابلے میں 8.0 فیصد اضافہ ظاہر کر رہا ہے۔

5. جی ڈی پی کے سہ ماہی تخمینے اشارے پر مبنی ہوتے ہیں اور بینچ مارک-انڈیکیٹر طریقہ استعمال کرتے ہوئے مرتب کیے جاتے ہیں، یعنی پچھلے سال کے لیے دستیاب سہ ماہی تخمینے، جنہیں بینچ مارک سال کہا جاتا ہے، شعبوں کی کارکردگی کی عکاسی کرنے والے متعلقہ اشاریوں کا استعمال کرتے ہوئے ،ایکسٹراپلیٹ کیا جاتا ہے۔ مختلف وزارتوں/محکموں/نجی ایجنسیوں سے حاصل کردہ اعدادوشمار  ان تخمینوں کی تالیف میں قابل قدر معلومات کا کام کرتا ہے۔شعبہ  وار تخمینے ایسے اشاریوں کا استعمال کرتے ہوئے مرتب کیے گئے ہیں جیسے (i) صنعتی پیداوار کا اشاریہ(آئی آئی پی )، ((iiنجی کارپوریٹ شعبے  میں درج کمپنیوں کی مالی کارکردگی، ان کمپنیوں کے لیے دستیاب سہ ماہی مالیاتی نتائج کی بنیاد پر، (iii) فصل کی پیداوارکے 24-2023 کے اہداف، iv) )24-2023کے لیے بڑے لائیو سٹاک مصنوعات کے لیے پیداواری اہداف، (v) مچھلی کی پیداوار، (vi) سیمنٹ اور فولاد کی پیداوار/ کھپت، (vii) ریلوے کے لیے خالص ٹن کلومیٹر اور مسافر کلومیٹر، ( viii) مسافر اور کارگو ٹریفک جو شہری ہوابازی  کے ذریعے سنبھالا جاتا ہے، (ix) بڑے اور چھوٹے سمندری بندرگاہوں پر کارگو ٹریفک، (x) تجارتی گاڑیوں کی فروخت، (xi) بینک ڈپازٹس اور کریڈٹس، (xii) 2023-24 کے لئے مرکزی اور ریاستی حکومتوں کے اکاؤنٹس وغیرہ۔ تخمینہ میں استعمال ہونے والے اہم اشاریوں میں فیصد تبدیلیاں ضمیمہ میں دی گئی ہیں۔

6. جی ڈی پی کی تالیف کے لیے استعمال ہونے والے کل ٹیکس محصول  میں نان جی ایس ٹی محصول  کے ساتھ ساتھ جی ایس ٹی محصولات بھی شامل ہے۔ کنٹرولر جنرل آف اکاؤنٹس (سی جی اے ) اور کمپٹرولر اینڈ آڈیٹر جنرل آف انڈیا (س اے جی ) کی ویب سائٹ پر دستیاب تازہ ترین معلومات کا استعمال، مصنوعات پر ٹیکس اور موجودہ قیمتوں پر مصنوعات پر سبسڈی کا تخمینہ لگانے کے لیے کیا گیا ہے۔ مستقل قیمتوں پر مصنوعات پر ٹیکس حاصل کرنے کے لیے، ٹیکس والے سامان نیز اشیاءاور خدمات کے حجم میں اضافے کا استعمال کرتے ہوئے، حجم میں اضافہ کیا جاتا ہے اور ٹیکسوں کا کل حجم حاصل کرنے کے لیے جمع کیا جاتا ہے۔ آمدنی کے اخراجات، سود کی ادائیگیوں، سبسڈیز وغیرہ کے لیے سی جی اے  اور سی اے جی  ویب سائٹس پر تازہ ترین دستیاب اعدادوشمار کا استعمال ،حکومت کے حتمی کھپت کے اخراجات (سی ایف سی ای) کا تخمینہ لگانے کے لیے کیا گیا۔

7. ماخذ ایجنسیوں کے ذریعہ کئے گئے ان پٹ ڈیٹا میں،اعدادوشمار کی  بہتر کوریج اور نظرثانی کا اثر ،ان تخمینوں کے بعد کی نظرثانی پر پڑے گا۔ اس لیے، ریلیز کے کیلنڈر کے مطابق، تخمینوں میں مذکورہ وجوہات کے لیے مناسب وقت پر نظر ثانی کیے جانے کا امکان ہے۔ صارفین کو اعداد و شمار کی تشریح کرتے وقت ان کو مدنظر رکھنا چاہیے۔

8. سہ ماہی جولائی تا ستمبر 2023 (2023-24کی دوسری سہ ماہی) کے سہ ماہی کے مجموعی گھریلو پیداوار کے  تخمینے کی اگلی ریلیز 30نومبر 2023 کوجاری  ہوگی۔

 

 

 

 

 

 

ضمیمہ

 

ٹیلی فون کے مجموعی سبسکرائبرس کے لئےاعدادوشمار31 مئی 2023 تک کے لئے ہیں *

 

پی ڈی ایف فارمیٹ میں دیکھنے کے لئے یہاں کلک کریں ۔

 

*************

 

ش ح۔اع۔رم

U-90 72               



(Release ID: 1953990) Visitor Counter : 90


Read this release in: Hindi , English , Marathi