امور داخلہ کی وزارت

مرکزی وزیر داخلہ اور وزیر تعاون جناب امت شاہ نے آج بارڈر سیکورٹی فورس (بی ایس ایف) کے مورنگ پلیس کا بھومی پوجن کیا اور گجرات کے کچھ میں مختلف منصوبوں کی ای نقاب کشائی کی



مورنگ پلیس، کوٹیشور کی 257 کروڑ روپے کی لاگت سے بھومی پوجن کے ساتھ ساتھ 28 کلومیٹر طویل چڈیاموڈ - بی آر بیٹ لنک روڈ کا افتتاح کیا گیا، جو سرحد پر تعینات بی ایس ایف کو آپریشنل اور لاجسٹک سپورٹ میں بہت مدد گار ثابت ہوگا

مرکزی وزیر داخلہ نے ہرامی نالہ کا دورہ کیا اور وہاں کی سیکورٹی صورتحال کا جائزہ لیا، سرحدی چوکی 1170 کا بھی دورہ کیا اور بی ایس ایف کے جوانوں سے بات چیت کی

ملک کی سرحدوں کی حفاظت کرنے والے ہمارے سیکورٹی فورسز کے جوانوں کے خاندانوں کی فلاح و بہبود وزیر اعظم جناب نریندر مودی کی ترجیح ہے

وزیر اعظم نریندر مودی نے ندابیٹ میں ایسے انتظامات کیے ہیں، جس سے عام شہری بی ایس ایف کے بارے میں واقف ہوں گے، بچے ملک کے بہادر فوجیوں کی بہادری اور قربانی پر فخر محسوس کر سکتے ہیں

مودی حکومت نے سیکورٹی اہلکاروں کے لیے بہت سی سہولیات فراہم کی ہیں

ملک کے 130 کروڑ عوام فوجیوں کی لگن اور قربانی کو بہت عزت کی نگاہ سے دیکھتے ہیں

جدید ترین کیمروں سے لیس چوکی ٹاور چھوٹی سے چھوٹی حرکت کو بھی پکڑ سکے گا اور ہمارے سرحدی محافظوں کو چوکس کر سکے گا

گجرات کے ساحلی علاقوں میں بہت سے اہم ادارے واقع ہیں، جس کی وجہ سے ساحلی سیکورٹی بہت اہم ہے اور اس سمت میں بی ایس ایف انتہائی چوکسی اور مستعدی کے ساتھ کام کر رہی ہے

بی ایس ایف میں زمین، پانی اور آسمان کی حفاظت کرنے کی صلاحیت اور ہمت ہے

بی ایس ایف کے 1900 سے زائد جوانوں نے ملک کی حفاظت میں اپنی عظیم قربانی دی ہے اور پورا ملک ان کی قربانی کو سلام پیش کرتا ہے

Posted On: 12 AUG 2023 7:30PM by PIB Delhi

مرکزی وزیر داخلہ اور وزیر تعاون جناب امت شاہ نے آج بارڈر سیکورٹی فورس (بی ایس ایف) کے مورنگ پلیس کا بھومی پوجن کیا اور گجرات کے کچھ میں مختلف منصوبوں کی ای نقاب کشائی کی۔ اس موقع پر مرکزی داخلہ سکریٹری اور ڈائریکٹر جنرل، بی ایس ایف سمیت کئی معززین موجود تھے۔ مرکزی وزیر داخلہ نے ہرامی نالہ کا دورہ کیا اور وہاں کی سیکورٹی صورتحال کا جائزہ لیا، سرحدی چوکی 1170 کا بھی دورہ کیا اور بی ایس ایف کے جوانوں سے بات چیت کی۔

 

 

جناب امت شاہ نے اپنے خطاب میں کہا کہ آج تین بنیادی ڈھانچے کے کاموں کا بھومی پوجن اور افتتاح ہوا ہے۔ انہوں نے کہا کہ آج مورنگ پلیس، کوٹیشور کا بھومی پوجن اور سنگ بنیاد رکھنے کی تقریب ہوئی ہے، جس کے تحت انتظامی کمپلیکس، افسران کا میس، کینٹین، پریڈ گراؤنڈ، ٹریننگ سینٹر، پانی کے برتنوں کی مرمت اور سپلائی کے لیے ایک ورکشاپ اور تقریباً 250 کروڑ روپے کی لاگت سے جدید ترین یونٹ قائم کیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس سہولت کی تعمیر کے بعد مغربی علاقے کے ہرامی نالہ سے پورے گجرات کی آبی سرحد تک بی ایس ایف کے واٹر ونگ کے تمام جہازوں کی ہموار دیکھ بھال کے لیے انتظامات تیار ہو جائیں گے۔ اس کے ساتھ ہی 257 کروڑ روپے کی لاگت سے مورنگ پلیس، کوٹیشور کے بھومی پوجن کے ساتھ ساتھ 101 کروڑ روپے کی لاگت سے بنائے گئے 28 کلومیٹر طویل چڈیاموڈ- بی آر بیٹ لنک روڈ کا افتتاح کیا گیا۔ انہوں نے کہا کہ آج ایک چوکی ٹاور 1164 کا بھی ای-افتتاح کیا گیا ہے اور اس 9.5 میٹر اونچے ٹاور میں جدید ترین کیمرے نصب ہیں جو سرحد پار سے معمولی حرکت کو بھی پکڑ سکیں گے اور ہمارے سرحدی محافظوں کو چوکس کر سکیں گے۔ انہوں نے کہا کہ او پی ٹاور کی تعمیر سے بی ایس ایف نا مساعد حالات میں بھی دشمن کی سرگرمیوں پر نظر رکھ سکے گی۔ انہوں نے کہا کہ ان تینوں کاموں کی اپنی اہمیت ہے لیکن ان میں سے سب سے کم لاگت چوکی کے ٹاور پر 3 کروڑ روپے آئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس سرحد کی حفاظت کے لیے اس طرح کے 7 چوکیوں کے ٹاور بنانا بہت ضروری ہے۔

مرکزی وزیر داخلہ نے کہا کہ سابق وزیر اعظم جناب اٹل بہاری واجپئی نے ایک سرحد، ایک فورس کا فیصلہ لیا تھا۔ انہوں نے کہا کہ اس فیصلے کی وجہ سے ہماری سرحد کی حفاظت کرنے والی افواج کے لیے جغرافیائی حالات، سرحدی ملک کے ساتھ ہمارے سیاسی تعلقات اور خطرات کا اندازہ لگانا بہت آسان ہو گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس وقت بی ایس ایف کو پاکستان اور بنگلہ دیش کی سرحد کی حفاظت کی ذمہ داری دی گئی تھی۔ یہ فیصلہ لینے کے پیچھے بہت گہری سوچ رہی ہوگی کیونکہ بی ایس ایف پاکستان اور بنگلہ دیش کی سرحدوں کی حفاظت کے لیے پوری طرح چوکس اور اہل ہے۔ جناب شاہ نے کہا کہ تمام سی اے پی ایف میں بی ایس ایف واحد فورس ہے جسے زمینی اور آبی سرحدوں کو محفوظ بنانے میں مہارت حاصل ہے اور اس کا اپنا فضائی ونگ بھی ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ بی ایس ایف میں ہندوستانی فوج کی طرح پانی، زمین اور آسمان کی حفاظت کرنے کی صلاحیت، طاقت اور ہمت ہے۔

 

 

جناب امت شاہ نے کہا کہ ملک کے وزیر داخلہ کی حیثیت سے، داخلی سلامتی کے نقطہ نظر سے، انہوں نے ملک کی سرحدوں کی حفاظت کے بارے میں یقین دلایا کیونکہ یہ ذمہ داری بی ایس ایف کے محفوظ ہاتھوں میں ہے۔ انہوں نے کہا کہ بی ایس ایف -43 ڈگری سے +43 ڈگری کے درجہ حرارت کے منفی حالات میں سرحدوں کی حفاظت کرتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ سندربن ہو، ہرامی نالہ، جموں و کشمیر کی برف پوش پہاڑیاں ہوں یا مختلف آبشاروں سے گھری بنگلہ دیش کی سرحد، بی ایس ایف نے ہمیشہ دشمن پر نظریں جمائے رکھی ہیں۔ جناب شاہ نے کہا کہ بہت سے اہم ادارے گجرات کے ساحلی علاقوں میں واقع ہیں، یہ ساحلی سلامتی کو بہت اہم بناتا ہے اور اس سمت میں بی ایس ایف انتہائی چوکسی اور تیزی کے ساتھ کام کر رہی ہے۔ ان سب کی حفاظت سال بھر میں بہت ضروری ہے۔ انہوں نے کہا کہ بی ایس ایف کے پاس 450 سے زیادہ پانی کے جہاز ہیں اور یہ سہولت ان کی دیکھ بھال اور چوکسی کو برقرار رکھنے میں ایک طویل سفر طے کرے گا۔

مرکزی وزیر داخلہ اور وزیر تعاون نے کہا کہ بی ایس ایف کے 1900 سے زیادہ جوانوں نے ملک کی سلامتی کے لیے عظیم قربانی دی ہے اور پورا ملک ان کی قربانی کو سلام پیش کرتا ہے اور انہیں خراج عقیدت پیش کرتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم جناب نریندر مودی کی رہنمائی میں سینکڑوں کروڑ کی لاگت سے ندا بیٹ میں ایسے انتظامات کیے گئے ہیں جس کے تحت عام شہری بی ایس ایف کے بارے میں جان سکتے ہیں، نوجوان تحریک لے سکتے ہیں اور بچے بہادری پر فخر محسوس کر سکتے ہیں۔ ملک کے بہادر سپاہیوں کی قربانی۔ بی ایس ایف کی تاریخ کے بارے میں تفصیلی معلومات فراہم کرنے والی ایک نمائش بھی رکھی گئی ہے اور بی ایس ایف کے شہید جوانوں کو خراج عقیدت پیش کرنے کا بھی انتظام کیا گیا ہے۔

 

 

جناب امت شاہ نے کہا کہ ہماری سیکورٹی فورسز کے جوان ملک کی سرحدوں کی حفاظت کر رہے ہیں اور وزیر اعظم جناب نریندر مودی نے ان کے خاندانوں کی فلاح و بہبود کی فکر کرنے میں کوئی کسر نہیں چھوڑ رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ آیوشمان سی اے پی ایف اسکیم کے تحت 39 لاکھ سے زیادہ آیوشمان سی اے پی ایف کارڈ تقسیم کیے گئے ہیں اور 24000 سے زیادہ اسپتالوں کو اس سے جوڑا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ جوانوں کے لیے 13000 نئے مکانات بنائے گئے ہیں، CAPFs کے ای-آواس پورٹل پر رجسٹر کرنے والوں کی تعداد 4,89,000 ہو گئی ہے اور صرف اس اقدام سے ہی رہائش کے اطمینان کا تناسب 13 فیصد بڑھ گیا ہے۔ جناب شاہ نے کہا کہ وزیر اعظم اسکالرشپ اسکیم شروع کی گئی ہے، مرکزی ایکس گریشیا فنڈ کو بھی منظم کیا گیا ہے، ایئر کورئیر خدمات کا بھی انتظام کیا گیا ہے اور سنٹرل پولیس ویلفیئر اسٹور کو بھی جدید اور عوام پر مبنی بنایا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ مودی حکومت نے سیکورٹی اہلکاروں کے لیے بہت سی سہولیات فراہم کی ہیں۔ جناب شاہ نے کہا کہ ملک کے 130 کروڑ لوگ جوانوں کی لگن اور قربانی کو بڑے احترام سے دیکھتے ہیں۔

 **************

 

 

ش ح۔ ف ش ع- م ف

U: 8295



(Release ID: 1948249) Visitor Counter : 106