الیکٹرانکس اور اطلاعات تکنالوجی کی وزارت

جناب الکیش کمار شرما، چیئرمین، جی 20 ڈیجیٹل اکانومی ورکنگ گروپ اور سکریٹری وزرات الیکٹرانکس اور انفارمیشن ٹکنالوجی نے قبل از تقریب پریس کانفرنس سے خطاب کیا


12 جون، 2023 کو الیکٹرانکس اور انفارمیشن ٹکنالوجی کے مرکزی وزیر مملکت جناب راجیو چندر شیکھر جی 20 کی تیسری میٹنگ کا افتتاح کریں گے، جس کے بعد 'گلوبل ڈیجیٹل پبلک انفراسٹرکچر (ڈی پی آئی) سمٹ' ہوگی

بھارت اسٹیک لیول پر ڈیجیٹل حل کے کامیاب نفاذ کے بارے میں تجربات کا تبادلہ کرنے کے خواہش مند کچھ ممالک کے ساتھ مفاہمت نامے پر دستخط کرے گا

 گلوبل ڈی پی آئی سمٹ میں 46 عالمی ممالک، تقریباً 150 غیر ملکی مندوبین، 9 ممالک کی وزارتی شرکت، یو این ڈی پی، یونیسکو، ڈبلیو ای ایف، ورلڈ بینک، آئی ٹی یو، اے ڈی بی، آئی سی آر آئی ایس اے ٹی، او ای سی ڈی، یو این سی ڈی ایف، ایشیا پی کے آئی کنسورشیم، بی ایم جی ایف اور 47
عالمی ڈیجیٹل ماہرین اعزازی مقررین کی حیثیت سے شرکت کریں گے

اس موقع پر ایک خصوصی نمائش منعقد کی جائے گی جس میں شناخت، ادائیگی، پیپر لیس گورننس، ڈیجیٹل زراعت، تعلیم اور مہارت، صحت کی دیکھ بھال اور بھارت کے ڈیجیٹل سفر سمیت 14 مخصوص ڈیجیٹل شعبوں میں بھارت کے سفر کو دکھایا جائے گا

Posted On: 11 JUN 2023 4:01PM by PIB Delhi

'جی-20 ڈیجیٹل اکانومی ورکنگ گروپ(ڈی ای ڈبلیو جی)' کے کام کو آگے بڑھاتے ہوئے الیکٹرانکس اور انفارمیشن ٹکنالوجی کی وزارت 12-14 جون کو پونے میں ڈی ای ڈبلیو جی کا چار روزہ اجلاس منعقد کر رہی ہے، اس سلسلے میں آج جی 20 ڈیجیٹل اکانومی ورکنگ گروپ کے جوائنٹ سکریٹری اور شریک چیئرمین جناب سشیل پال کی موجودگی میں پری ایونٹ پریس کانفرنس کا انعقاد کیا گیا۔

https://static.pib.gov.in/WriteReadData/userfiles/image/G20Pune1117QKT.JPG

جی 20 ڈیجیٹل اکانومی ورکنگ گروپ (ڈی ای ڈبلیو جی) کے تیسرے اجلاس کے پہلے دن الیکٹرانکس اور انفارمیشن ٹکنالوجی کے مرکزی وزیر مملکت جناب راجیو چندر شیکھر دو روزہ کانفرنس 'گلوبل ڈی پی آئی سمٹ' اور 'گلوبل ڈی پی آئی ایگزیبیشن' کا افتتاح کریں گے۔ افتتاحی تقریب جمہوریہ آرمینیا کے ہائی ٹکنالوجی انڈسٹری کے پہلے نائب وزیر جناب گیورگ منتاسین، سیرالیون کے مستقل سکریٹری جناب تمبا ایڈورڈ جوانا، سورینام کے وزیر محترمہ رشما نمی کلدیپ سنگھ اور وزارت کے سکریٹری جناب الکیش کمار شرما کی موجودگی میں منعقد ہوگی۔ افتتاحی اجلاس میں بھارت کچھ ممالک کے ساتھ مفاہمت کی یادداشت (ایم او یو) پر دستخط کرے گا جو انڈیا اسٹیک پر ڈیجیٹل حل کو نافذ کرنے میں بھارت کے تجربے کو بانٹنے کے لیے تیار ہیں۔

اگلے دو دنوں تک جاری رہنے والے عالمی ڈی پی آئی سربراہ اجلاس میں عالمی ماہرین اور ڈیجیٹل رہنما عالمی ماہرین اور ڈیجیٹل رہنماؤں کے ساتھ 'ڈیجیٹل پبلک انفراسٹرکچر (ڈی پی آئی)'، 'لوگوں کو بااختیار بنانے کے لیے ڈیجیٹل شناخت'، 'ڈیجیٹل پیمنٹس اینڈ فنانشل انکلوژن'، 'موثر سروس ڈیلیوری کے لیے ڈیجیٹل دستاویز تبادلہ'، 'ڈی پی آئی کے لیے کریٹیکل پبلک انفراسٹرکچر (پی کے آئی)' سمیت دیگر موضوعات پر گفت و شنید کریں گے۔ 'ڈیجیٹل ایجوکیشن اینڈ سکلز' کے موضوع پر مباحثوں کا انعقاد کیا جائے گا۔ 'ڈیجیٹل ہیلتھ اینڈ کلائمیٹ ایکشن کے لیے ڈی پی آئی'، 'ڈیجیٹل ایگریکلچر ایکو سسٹم' اور 'گلوبل ڈی پی آئی ایکو سسٹم کی تعمیر' کے موضوعات پر بھی خیالات کا تبادلہ ہوگا۔ سمٹ میں تقریباً 300 سینئر مندوبین شرکت کریں گے جن میں سے 46 ممالک اور تقریباً 150 غیر ملکی مندوبین بھی شرکت کر رہے ہیں جبکہ 9 ممالک کے وزرا بھی شرکت کر رہے ہیں۔ کانفرنس میں 47 عالمی ڈیجیٹل ماہرین معزز مقررین کے طور پر شرکت کریں گے جو ڈیجیٹل مہارت اور اس شعبے میں اپنے ملک کے تجربے کا اشتراک کریں گے۔ اجلاس میں شرکت کرنے والی بین الاقوامی تنظیموں میں یو این ڈی پی، یونیسکو، ورلڈ اکنامک فورم (ڈبلیو ای ایف)، ورلڈ بینک، انٹرنیشنل ٹیلی کمیونیکیشن یونین (آئی ٹی یو)، ایشیائی ترقیاتی بینک (اے ڈی بی)، انٹرنیشنل کرپس ریسرچ انسٹی ٹیوٹ فار دی سیمی ایریڈ ٹروپکس (آئی سی آر آئی ایس اے ٹی)، آرگنائزیشن فار اکنامک کوآپریشن اینڈ ڈیولپمنٹ (او ای سی ڈی)، اقوام متحدہ کے کیپٹل ڈیولپمنٹ فنڈ (یو این سی ڈی ایف)، ایشیا پی کے آئی کنسورشیم، بل اور میلنڈا گیٹس شامل ہیں۔

https://static.pib.gov.in/WriteReadData/userfiles/image/G20Pune112QTV1.JPG

 

کانفرنس میں ڈیجیٹل شناخت، فاسٹ پیمنٹ، ڈیجی لاکر، سوائل ہیلتھ کارڈ، ای نیشنل ایگریکلچر مارکیٹ، جدید ترین گورننس، انٹیگریٹڈ موبائل ایپ، ڈیجیٹل کامرس کے لیے اوپن نیٹ ورک، اینامورفک تجربہ، ہوائی اڈے پر بلا تعطل سفر کا تجربہ، زبان کا ترجمہ، سیکھنے کے حل، ٹیلی میڈیکل مشاورت کا تجربہ اور بھارت کے ڈیجیٹل سفر کی سہولت جیسے 14 تجربات پیش کیے جائیں گے۔

اجلاس کے دوسرے اور تیسرے روز جی 20 کے ارکان، مدعو مہمان ممالک اور بین الاقوامی تنظیمیں 'ڈیجیٹل پبلک انفراسٹرکچر'، 'سائبر سیکیورٹی' اور 'ڈیجیٹل اسکلنگ' جیسے ترجیحی شعبوں میں اقدامات پر وسیع پیمانے پر تبادلہ خیال کریں گی۔

'سٹی سیف آن لائن (ایس ایس او)' مہم اور 'جی 20 ڈیجیٹل انوویشن الائنس (ڈی آئی اے)' کا آغاز بھارتی صدارت کے تحت کیا گیا ہے تاکہ جی 20 کے رکن ممالک میں عام لوگوں، خاص طور پر نوجوانوں اور کاروباری افراد سے رابطہ قائم کیا جا سکے۔ اب تک 2,19,000 سے زیادہ افراد نے سٹی سیف آن لائن مہم میں قومی سطح کے سائبر کوئز میں حصہ لیا ہے اور 2460 سے زیادہ اسٹارٹ اپس نے مقابلے کے لیے درخواستیں دی ہیں۔

مزید تفصیلات یہاں دیکھی جا سکتی ہیں:

گلوبل ڈی پی آئی سمٹ: https://dpi.negd.in/

انڈیا سٹاک گلوبل: https://www.indiastack.global/

گلوبل ڈی پی آئی سمٹ لائیو: https://www.youtube.com/DigitalIndiaofficial

***

(ش ح – ع ا – ع ر)

U. No. 6044

 



(Release ID: 1931516) Visitor Counter : 95


Read this release in: English , Marathi , Hindi