کوئلے کی وزارت

کوئلہ سیکٹر بڑھتی ہوئی گھریلو مانگ کو پورا کرنے کے لیے پوری طرح تیار ہے- وزیر پرہلاد جوشی


کانوں کی حفاظت کو یقینی بنانے اور زیر زمین کوئلہ کی کانکنی  کوبڑھانے کی اپیل

کول انڈیا نے ’’زیر زمین کوئلہ کان کنی - پائیدار توانائی کی حفاظت کے لیے آگے کا راستہ‘‘ پر خصوصی کانفرنس اور نمائش کا اہتمام کیا

Posted On: 06 JUN 2023 5:40PM by PIB Delhi

کوئلہ، کانوں اور پارلیمانی امور کے مرکزی وزیر جناب پرہلاد جوشی نے ملک کو یقین دلایا  ہےکہ آنے والے مانسون کے موسم میں بھی کوئلے کی کوئی کمی نہیں ہوگی۔ انہوں نے کہا کہ ہندوستان کا کوئلہ سیکٹر ہماری تیزی سے بڑھتی ہوئی معیشت کی  گھریلو مانگ کو پورا کرنے کے لیے پوری طرح تیار ہے۔

کوئلہ کی وزارت، کول انڈیا لمیٹڈ (سی آئی ایل) کے زیر اہتمام آج یہاں ایک اعلیٰ سطحی کانفرنس اور نمائش سے خطاب کرتے ہوئے ’’زیر زمین کوئلہ کان کنی - پائیدار توانائی کی حفاظت کے لیے آگے بڑھنے کا راستہ‘‘، کے موضوع پر جناب پرہلاد جوشی نے سی آئی ایل پر زور دیا کہ وہ اگلے 2-3 سال میں کوئلہ برآمد کنندہ کے طور پر ابھرے۔ وزیر موصوف نے کوئلے کی ریکارڈ پیداوار حاصل کرنے کے لیے کول انڈیا لمیٹڈ اور اس کے ذیلی اداروں کی تعریف کی اور کہا کہ کوئلے کے شعبے میں آتم نربھر ہندوستان کے لیے کام کرتے ہوئے پائیدار کان کنی کو یقینی بنانے کی ضرورت ہے۔ جناب جوشی نے تیز رفتار پیداوار پر توجہ دیتے ہوئے کوئلے کی کانوں میں حفاظت کو انتہائی ترجیح کے ساتھ یقینی بنانے پر زور دیا۔

وزیر موصوف نے یہاں تک کہ نشاندہی کی  کہ جبکہ عالمی معیشت سست روی سے گزر رہی ہے، ہندوستان عالمی سطح پر تیزی سے ترقی کرنے والی معیشتوں میں سے ایک کے طور پر ایک روشن مقام کے طور پر ابھرا ہے۔ جناب جوشی نے مزید کہا کہ حالیہ برسوں میں بین الاقوامی سطح پر ہندوستان کی ساکھ میں کافی اضافہ ہوا ہے اور یہ ملک دنیا کی فیکٹری بن کر ابھرا ہے۔ انہوں نے کوئلے کے شعبے پر زور دیا کہ وہ آنے والے سالوں میں ملک کی بڑھتی ہوئی توانائی کی ضروریات کو پورا کرنے کے لیے مناسب ایکشن پلان وضع کریں۔ وزیر موصوف نے تجارتی کوئلے کی کان کنی کو بڑھانے کے لیے وزارت کوئلہ کی جانب سے کیے گئے نئے اقدامات اور اصلاحات کی تعریف کی۔ انہوں نے کہا کہ کمرشل نیلامی کے تحت 87 کول بلاکس کی کامیابی سے نیلامی ہو چکی ہے اور ان میں سے کچھ نے پیداوار شروع کر دی ہے۔ جناب جوشی نے کہا کہ کوئلے کی پیداوار کو بڑھانے کے لیے نئی حکمت عملیوں پر غور و خوض ایک درست سمت میں ایک قدم ہے۔

سی آئی  ایل کے زیر زمین کوئلے کی کان کنی کے وژن کے منصوبے کو جاری کرنے کے بعد، جناب جوشی نے حفاظت، پیداوار، پائیداری، معیار اور ای آر پی  جیسے مختلف زمروں میں سی آئی ایل کی بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کرنے والے ذیلی اداروں کے لیے "کول منسٹر ایوارڈ" دیا۔ وزیر موصوف نے یہ بھی خواہش ظاہر کی کہ اختراع کے لیے ایک الگ ایوارڈ متعارف کرایا جائے۔ قبل ازیں وزیر موصوف نے کانفرنس کے ایک حصے کے طور پر منعقدہ ایک خصوصی نمائش کا افتتاح کیا۔

کوئلہ کی وزارت کے سکریٹری جناب امرت لال مینا نے اپنے خطاب میں نجی شعبے کی مزید فرموں کو کوئلے کی کان کنی میں راغب کرنے کی اہمیت پر زور دیا۔ انہوں نے کہا کہ کووڈ سے پہلے کے دور کے مقابلے کوئلے کی درآمد میں کافی کمی آئی ہے۔ جناب مینا نے حفاظت کو یقینی بناتے ہوئے ریکارڈ پیداوار اور آف ٹیک کو یقینی بنانے کے لیے کوئلے کے جنگجوؤں کی تعریف کی۔ سیکرٹری نے مزید کہا کہ کوکنگ کول مشن کے ساتھ زیر زمین کان کنی کو مزید فروغ دینے کی ضرورت ہے۔

 

اسٹریٹجک لحاظ سے اہم کانفرنس میں شرکاء کا خیرمقدم کرتے ہوئے، کول انڈیا لمیٹڈ کے سی ایم ڈی جناب پرمود اگروال نے نشاندہی کی کہ ہندوستان کی کوئلے کی ریکارڈ پیداوار نے عالمی منڈی میں کوئلے کی قیمت میں کمی کی راہ ہموار کی ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ماحولیات پر محدود اثرات بشمول جنگلات کا احاطہ اور کوئلے کا اعلیٰ معیار زیر زمین کان کنی کے چند اہم فوائد ہیں۔

تقریب سے خطاب کرتے ہوئے جناب ایم ناگراجو، ایڈیشنل سکریٹری اور نامزد اتھارٹی، وزارت کوئلہ نے کہا کہ 2035-40 تک ہندوستان کی کوئلے کی ضرورت دو بلین ٹن تک جا سکتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ زیر زمین کان کنی پر توجہ دیتے ہوئے نئی ٹیکنالوجی کا تعارف، نجی شعبے کو راغب کرنا، پائیداری کو یقینی بنانا وغیرہ اہم عوامل ہیں۔

کانفرنس کا مقصد کوئلے کی پائیدار پیداوار کے لیے کوئلے کے شعبے میں آتم نربھر بھارت کی جانب دیسی ٹیکنالوجی پر توجہ مرکوز کرنا ہے۔ ان اہداف کا حصول ہر اسٹیک ہولڈر، ٹیکنالوجی فراہم کرنے والے، آلات بنانے والے اور عمل درآمد کرنے والی ایجنسیوں کی مشترکہ کوششوں اور کاوشوں سے ہی ممکن ہے۔ لہذا، اسٹیک ہولڈرز مستقبل کی کان کنی کی سرگرمیوں کی حکمت عملی کے لیے بہت اہم کردار ادا کرتے ہیں۔

اس پس منظر میں، کانفرنس نے ملک کے ہدف کو حاصل کرنے کے لیے جدید تکنیکی سائنسی تعاون کو فروغ دینے کے لیے ایک فورم فراہم کیا۔ کانفرنس اسٹیک ہولڈرز کے لیے جدید ترین ٹیکنالوجی پر بات چیت کرنے کا صحیح پلیٹ فارم بن گیا، جس سے مجموعی طور پر کان کنی کی کمیونٹیز کو فائدہ پہنچے گا۔

*****

ش ح۔   ش ت۔ج

Uno-5880



(Release ID: 1930306) Visitor Counter : 121


Read this release in: English , Marathi , Hindi , Tamil