ریلوے کی وزارت

موبائل ایپلی کیشن پر یو ٹی ایس اب ہندی زبان میں دستیاب ہے

غیر ریزرو ٹکٹوں کی بکنگ کے تجربے کو مزید آسان بنانے کے لیے ایسا کیا گیا ہے

یو ٹی ایس موبائل ایپلی کیشن میں 1.47 کروڑ رجسٹرڈ صارفین ہیں

Posted On: 24 SEP 2021 5:18PM by PIB Delhi

نئی دہلی:24ستمبر،2021۔حکومت ہند کی جانب سے ڈیجیٹل انڈیا اقدام کے طور پر اور تین سی - کیش لیس ٹرانزیکشن (ڈیجیٹل ادائیگی)، کنٹیکٹ لیس ٹکٹنگ (جسمانی طور پر پوائنٹ آف سیل پر جانے کی ضرورت نہیں) اور کسٹمر کی سہولت اور تجربہ کے لئے موبائل ایپ پر یو ٹی ایس اب انگریزی کے علاوہ ہندی زبان میں دستیاب ہے۔ صارف اپنی پسند کی کسی بھی زبان کا انتخاب کرسکتا ہے۔ یو ٹی ایس آن موبائل ایپ کا استعمال کرتے ہوئے صارفین پیپر لیس یا پیپر ٹکٹ موڈ کے درمیان انتخاب کرسکتے ہیں اور نیچے دیے گئے کسی بھی قسم کے ٹکٹ بک کروا سکتے ہیں:-

  • سفر ٹکٹ بکنگ
  • سیزن ٹکٹ بکنگ/تجدید
  • پلیٹ فارم ٹکٹ بکنگ

صارفین کے لیے موبائل ٹکٹنگ کے فوائد

  1. ٹکٹ کی قطار میں انتظار نہیں۔
  2. پیپر لیس اور ماحول دوست۔
  3. ایک بار جب ٹکٹ بک ہو جاتا ہے تو بغیر کسی انٹرنیٹ کنکشن کے آف لائن موڈ میں بھی ٹی ٹی ای کو ٹکٹ دکھایا جا سکتا ہے۔
  4. بھاگتے ہوئے بکنگ: - جو مسافر جلدی میں ہے یا آخری لمحے میں سفر کرنے کا فیصلہ کرتا ہے وہ صرف اسٹیشن پہنچ سکتا ہے، اسٹیشن پر مختلف مقامات پر دکھائے جانے والے QR کوڈ کو اسکین کر سکتا ہے۔ اسے اسکین کریں اور ٹکٹ بک کروائیں۔ یہ سہولت فی الحال 1600 اسٹیشنوں پر دستیاب ہے۔
  5. مکمل طور پر کیش لیس: - کسٹمر ہر قسم کے ڈیجیٹل ادائیگی کے اختیارات یعنی ریل-والیٹ، ڈیبٹ کارڈ، کریڈٹ کارڈ، نیٹ بینکنگ، یو پی آئی اور ای بٹوے استعمال کرسکتا ہے۔
  6. سستا: - ریل والٹ سہولت استعمال کرنے والے کسٹمر کو ریچارج پر 5 فیصد بونس دیا جاتا ہے۔ مثال کے طور پر اگر کوئی مسافر اپنے والیٹ کو  1000  روپے سے ریچارج کرتا ہے تو اسے 1050 کی ریچارج ویلیو ملتی ہے۔

موبائل ٹکٹ ایپلی کیشن مکمل طور پر انڈین ریلوے (سی آر آئی ایس) کے ذریعہ گھر میں تیار کی گئی ہے اور اینڈرائیڈ اور آئی او ایس پلیٹ فارمز پر دستیاب ہے اور متعلقہ اسٹورز سے مفت ڈاؤن لوڈ کی جا سکتی ہے۔ ایپلیکیشن کو اس کے استعمال اور صارفین کے تجربے کے لیے وسیع پیمانے پر سراہا گیا ہے اور اسے گوگل پلے سٹور پر فور سٹار ریٹنگ ملی ہے۔ یو ٹی ایس موبائل ایپلی کیشن کے رجسٹرڈ صارفین کی تعداد 1.47 کروڑ ہے۔

https://static.pib.gov.in/WriteReadData/userfiles/image/image0017LQQ.jpg

بیک گراؤنڈر

روایتی طور پر  ریلوے اسٹیشنوں کے بکنگ کاؤنٹرز پر غیر ریزرو ٹکٹ فروخت کیے جاتے تھے۔ بکنگ کاؤنٹرز پر مسافروں کے انتظار کا وقت کم کرنے کے لیے ریلوے ٹکٹنگ ایجنٹس اور خودکار ٹکٹ وینڈنگ مشینیں بڑے اسٹیشنوں پر فروخت کے اضافی مقامات کے طور پر متعارف کروائی گئیں۔ تاہم فروخت کے ان تینوں مقامات پر گاہک کی جسمانی موجودگی درکار تھی۔

یو ٹی ایس موبائل ٹکٹنگ 27 دسمبر 2014 کو شروع کی گئی تھی۔ اس کے بعد اس نظام کی سختی سے حفاظت، تحفظ اور کسٹمر کے تجربے کے پیرامیٹرز پر جانچ کی گئی اور بعد میں پورے ممبئی کے مضافاتی علاقوں میں پھیل گئی۔ بتدریج موبائل ٹکٹنگ کو سال 17-2015 کے درمیان چنئی، دہلی، کولکاتہ اور سکندرآباد کے میٹرو شہروں تک بڑھایا گیا۔ یکم نومبر 2018 سے یو ٹی ایس موبائل ٹکٹنگ بین زونل سفر کے لیے بھی دستیاب ہے یعنی عام ٹکٹنگ کی طرز پر پورے ہندوستانی ریلوے کے کسی بھی جوڑے اسٹیشنوں کے درمیان۔

 

-----------------------

ش ح۔م ع۔ ع ن

U NO: 9371



(Release ID: 1757979) Visitor Counter : 42