کامرس اور صنعت کی وزارتہ

مارچ2021 کیلئے آٹھ بنیادی صنعتوں کا اشاریہ (بیس :2011-12=100)

Posted On: 30 APR 2021 5:00PM by PIB Delhi

 

      صنعت اور اندرونی تجارت کے فروغ کےمحکمہ کے معاشی صلاح کار کا دفتر مارچ 2021 کیلئے آٹھ بنیادی صنعتوں کا اشاریہ جاری کررہا ہے۔آٹھ بنیادی صنعتوں کا مشترکہ اشاریہ مارچ 2021 میں 143.1 پر رہا ۔جس میں مارچ 2020 کے مقابلے 6.8 فیصدی (عارضی)کا اضافہ درج کیا گیا ۔ان کی مجموعی ترقی اپریل- مارچ 21-2020 کے درمیان (-)7 فیصد رہی۔

آٹھ بنیادی صنعتوں کے اشاریہ کی حتمی شرح نمو دسمبر 2020 میں اصلاح کے ساتھ 0.4 فیصد تک پہنچی جبکہ اس کی عارضی سطح (-)1.3 فیصد تھی۔صنعتی مصنوعات کے اشاریہ میں شامل تمام آئیٹمس کے 40.27 فیصد کی تیاری آٹھ بنیادی صنعتوں میں ہوتی ہے۔سالانہ اور ماہانہ اشاریہ اور ان کی شرح نمو کی تفصیلات ضمیمہ نمبر 1 اور2 میں دی جارہی ہے۔

ذیل کے گراف میں آٹھ بنیادی صنعتوں کے اشاریہ کی ماہانہ شرح نمو (مجموعی) دکھائی گئی ہے۔

https://static.pib.gov.in/WriteReadData/userfiles/image/image001ET7S.jpg

عارضی

آٹھ بنیادی صنعتوں کے اشاریہ کا خلاصہ درج ذیل ہے:

کوئلہ۔مارچ 2021 میں کوئلے کی پیداوار (وزن10.33فیصد) مارچ 2020 کے مقابلے 21.9 فیصد گھٹ گئی۔سال 21-2020 کی اپریل -  مارچ مدت کے دوران اس کا مجموعی اشاریہ پچھلے سال کی اسی مدت کے مقابلے میں 4.8 فیصد گر گیا۔

خام تیل۔مارچ 2021 کے دوران خام تیل کی پیداوار (وزن 9.98 فیصد) مارچ 2020 کے مقابلے میں 3.1 فیصد گر گیا۔سال 21-2020 کی اپریل ۔مارچ کی مدت کے دوران اس کا مجموعی اشاریہ گزشتہ مالی سال کی اسی مدت کے مقابلے میں 5.2 فیصد کم رہا ۔

قدرتی گیس۔مارچ 2021 میں قدرتی گیس کی پیداوار (وزن 6.88 فیصد ) مارچ 2020 کے مقابلے میں 12.3 فیصد بڑھا۔سال 21-2020 کی اپریل -مارچ  مدت کے دوران اس کا مجموعی اشاریہ پچھلے مالی سال کی اسی مدت کے مقابلے میں 8.2 فیصد گھٹ گیا۔

پٹرولیم اور ریفائنری مصنوعات۔پٹرولیم ریفائنری مصنوعات کی پیدوار (وزن 28.04 فیصد) مارچ 2021 میں ،مارچ 2020 کے مقابلے میں 0.7 فیصد گھٹ گیا۔وہیں سال 21-2020 کی اپریل تا مارچ مدت کے دوران اس کا مجموعی اشاریہ پچھلے مالی سال کی اسی مدت کے مقابلے میں 11.2 فیصد کم رہا۔

کھاد۔مارچ 2021 کے دوران کھاد کی پیداوار (وزن 2.63 فیصد)مارچ 2020 کے مقابلے میں 5.0 فیصد گھٹ گئی ۔ادھر سال 21-2020 کے اپریل – مارچ مدت کے دوران اس کا مجموعی اشاریہ گزشتہ مالی سال کی اسی مدت کے مقابلے میں 1.8 فیصد زیادہ رہا ۔

اسٹیل۔مارچ 2021 میں اسٹیل کی پیداوار (وزن 17.92 فیصد)مارچ 2020 کے مقابلے میں 23.0 فیصد بڑھا ۔سال 21-2020 کی اپریل- مارچ کی مدت کے دوران اس کا مجموعی اشاریہ پچھلے مالی سال کی اسی مدت کے مقابلے میں 9.5 فیصد کم رہا۔

سیمنٹ۔ مارچ 2021 کے دوران سیمنٹ کی پیداوار (وزن 5.37 فیصد) مارچ 2020 کے مقابلے میں 32.5 فیصد گھٹ گیا۔سال 21-2020 کی اپریل- مارچ مدت کے دوران اس کا مجموعی اشاریہ گزشتہ مالی سال کی اسی مدت کے مقابلے میں 11.9 فیصد کم رہا ۔

بجلی۔فروری 2021 کے دوران بجلی کی پیداوار (وزن 19.85 فیصد) میں مارچ 2020 کے مقابلے میں 21.6 فیصد کا اضافہ ہوا۔سال 21-2020 کی اپریل- مارچ مدت  کے دوران اس کا مجموعی اشاریہ گزشتہ مالی سال کی اسی مدت کے مقابلے میں 0.6 فیصد کم رہا ۔

نوٹ1:جنوری 2021 ،فروری 2021 اور مارچ  2021 کے اعدادو شمار ابتدائی ہیں۔

نوٹ 2:اپریل 2014 سے قابل تجدید وسائل کا بجلی کی پیدوارسے متعلق تخمینہ بھی شامل کیا گیا ہے۔

نوٹ3:مذکورہ بالا صنعت وار اوزان دراصل آئی آئی پی سے موصولہ الگ الگ صنعتی اوزن ہیں اور اسے 100 کے برابر آئی سی آئی کے مجموعی وزن میں متناسب بنیاد پر اضافہ کے ساتھ دکھایا گیا ہے۔

نوٹ 4: مارچ 2019 سے ہی تیار فولاد کی پیداوار کے تحت کولڈ رولڈ (سی آر) کوائلس کے تحت ہاٹ رولڈ پکلڈ اینڈ آئلڈ (ایچ آر پی او)نام کے ایک نئی فولادی پروڈکٹ کو بھی شامل کیا جارہا ہے۔

نوٹ 5:اپریل 2021 کیلئے اشاریہ پیر 31 مئی 2021 کو جاری کیا جائے گا۔


ضمیمہ  1

آٹھ بنیادی صنعتوں کی کارکردگی

سالانہ اشاریہ اور شرح نمو

بنیادی سال :

2011-12=100

اشاریہ

شعبہ

وزن

2012-13

2013-14

2014-15

2015-16

2016-17

2017-18

2018-19

2019-20

2020-21* (اپریل سے مارچ)

کوئلہ

10.3335

103.2

104.2

112.6

118.0

121.8

124.9

134.1

133.6

127.3

خام تیل

8.9833

99.4

99.2

98.4

97.0

94.5

93.7

89.8

84.5

80.1

قدرتی گیس

6.8768

85.6

74.5

70.5

67.2

66.5

68.4

69.0

65.1

59.8

ریفائنری مصنوعات

28.0376

107.2

108.6

108.8

114.1

119.7

125.2

129.1

129.4

114.9

کھاد

2.6276

96.7

98.1

99.4

106.4

106.6

106.6

107.0

109.8

111.8

اسٹیل

17.9166

107.9

115.8

121.7

120.2

133.1

140.5

147.7

152.6

138.1

سیمنٹ

5.3720

107.5

111.5

118.1

123.5

122.0

129.7

147.0

145.7

128.3

بجلی

19.8530

104.0

110.3

126.6

133.8

141.6

149.2

156.9

158.4

157.5

مجموعی اشاریہ

100.00

103.8

106.5

111.7

115.1

120.5

125.7

131.2

131.6

122.5

*عارضی

 

 

 

شرح نمو سال در سال

 

شعبہ

وزن

2012-13

2013-14

2014-15

2015-16

2016-17

2017-18

2018-19

2019-20

2020-21* (اپریل سے مارچ)

کوئلہ

10.3335

3.2

1.0

8.0

4.8

3.2

2.6

7.4

-0.4

-4.8

خام تیل

8.9833

-0.6

-0.2

-0.9

-1.4

-2.5

-0.9

-4.1

-5.9

-5.2

قدرتی گیس

6.8768

-14.4

-12.9

-5.3

-4.7

-1.0

2.9

0.8

-5.6

-8.2

ریفائنری مصنوعات

28.0376

7.2

1.4

0.2

4.9

4.9

4.6

3.1

0.2

-11.2

کھاد

2.6276

-3.3

1.5

1.3

7.0

0.2

0.03

0.3

2.7

1.8

اسٹیل

17.9166

7.9

7.3

5.1

-1.3

10.7

5.6

5.1

3.4

-9.5

سیمنٹ

5.3720

7.5

3.7

5.9

4.6

-1.2

6.3

13.3

-0.9

-11.9

بجلی

19.8530

4.0

6.1

14.8

5.7

5.8

5.3

5.2

0.9

-0.6

مجموعی ترقی

100.00

3.8

2.6

4.9

3.0

4.8

4.3

4.4

0.4

-7.0

*عارضی

 

 

ضمیمہ 2

آٹھ بنیادی صنعتوں کی کارکردگی

ماہانہ اشاریہ اور شرح نمو

بنیادی سال:

2011-12=100

اشاریہ

شعبہ

کوئلہ

خام تیل

قدرتی گیس

ریفائنری

کھاد

اسٹیل

سیمنٹ

بجلی

مجموعی

وزن

10.3335

8.9833

6.8768

28.0376

2.6276

17.9166

5.3720

19.8530

100.00

مارچ-20

209.7

85.0

60.1

135.3

98.3

133.2

129.8

146.9

134.0

اپریل-20

103.7

80.2

53.3

94.2

85.0

26.9

22.5

125.6

81.2

مئی-20

109.4

82.0

57.2

102.0

113.4

96.4

117.3

150.6

107.7

جون-20

104.3

79.6

58.1

110.6

114.6

122.3

137.8

156.2

116.3

جولائی-20

100.3

83.0

61.2

114.5

119.4

141.9

126.8

166.3

122.5

اگست-20

98.2

81.2

61.0

105.9

120.8

150.7

109.1

162.7

119.7

ستمبر-20

105.6

78.3

57.5

106.3

113.5

149.9

126.8

166.4

121.4

اکتوبر-20

122.4

80.9

60.6

111.5

122.8

158.4

141.3

162.2

126.7

نومبر-20

137.9

78.3

58.4

126.5

118.5

156.0

132.1

144.8

127.7

دسمبر-20

156.2

80.5

60.8

126.9

117.0

170.9

147.8

157.9

136.1

جنوری-21*

161.6

81.1

64.0

130.9

119.7

165.1

154.6

164.2

138.7

فروری-21*

163.6

73.2

57.7

114.8

103.9

154.9

151.7

153.9

128.8

مارچ-21*

163.8

82.3

67.4

134.4

93.4

163.8

171.9

178.6

143.1

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

*عارضی

 

شرح نمو (سال در سال)

شعبہ

کوئلہ

خام تیل

قدرتی گیس

 ریفائنری مصنوعات

کھاد

اسٹیل

سیمنٹ

بجلی

مجموعی ترق

وزن

10.3335

8.9833

6.8768

28.0376

2.6276

17.9166

5.3720

19.8530

100.00

مارچ-20

4.0

-5.5

-15.1

-0.5

-11.9

-21.9

-25.1

-8.2

-8.6

اپریل-20

-15.5

-6.4

-19.9

-24.2

-4.5

-82.8

-85.2

-22.9

-37.9

مئی-20

-14.0

-7.1

-16.8

-21.3

7.5

-40.4

-21.4

-14.8

-21.4

جون-20

-15.5

-6.0

-12.0

-8.9

4.2

-23.2

-6.8

-10.0

-12.4

جولائی-20

-5.7

-4.9

-10.2

-13.9

6.9

-6.5

-13.5

-2.4

-7.6

اگست-20

3.6

-6.3

-9.5

-19.1

7.3

0.5

-14.5

-1.8

-6.9

ستمبر-20

21.0

-6.0

-10.6

-9.5

-0.3

6.2

-3.4

4.8

0.6

اکتوبر-20

11.7

-6.2

-8.6

-17.0

6.3

5.9

3.2

11.2

-0.5

نومبر-20

3.3

-4.9

-9.3

-4.8

1.6

0.7

-7.3

3.5

-1.1

دسمبر-20

2.2

-3.6

-7.2

-2.8

-2.9

3.5

-7.2

5.1

0.4

جنوری-21*

-1.9

-4.6

-2.0

-2.6

2.7

6.2

-5.8

5.5

0.9

فروری-21*

-4.4

-3.2

-1.0

-10.9

-3.7

1.3

-5.6

0.2

-3.8

مارچ-21*

-21.9

-3.1

12.3

-0.7

-5.0

23.0

32.5

21.6

6.8

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

*عارضی

 

*******

ش ح- س ب- م ش

 U: 4149

 

 



(Release ID: 1715652) Visitor Counter : 11


Read this release in: Bengali , English , Hindi