وزارت دفاع

ڈی آر ڈی او کا سمندری تحقیقی جہاز ’آئی این ایس ساگردھونی‘ اوشن ریسرچ اینڈ ڈیولپمنٹ میں بحر ہند کے ریم ممالک کے ساتھ طویل مدتی سائنسی شراکت داری قائم کرنے کے لیے ساگر میتری مشن -4 پر روانہ ہوا

Posted On: 12 OCT 2023 5:53PM by PIB Delhi

 ڈی آر ڈی او کے نیول فزیکل اینڈ اوشینوگرافک لیبارٹری (این پی او ایل) کے سمندری تحقیقی جہاز آئی این ایس ساگردھونی نے 12 اکتوبر، 2023کو جنوبی جیٹی، سدرن نیول کمانڈ (ایس این سی)، کوچی سے دو ماہ طویل ساگر میتری (ایس ایم) مشن -2023 کا افتتاح کیا۔ محکمہ دفاع کے سکریٹری آر اینڈ ڈی اور چیئرمین ڈی آر ڈی او ڈاکٹر سمیر وی کامت نے قائم مقام فلیگ آفیسر کمانڈنگ ان چیف (جنوبی) ریئر ایڈمرل اپل کنڈو اور ڈی آر ڈی او اور بھارتی بحریہ کے دیگر سینئر عہدیداروں کی موجودگی میں جہاز کو ہری جھنڈی دکھائی۔

ساگر میتری ڈی آر ڈی او کی ایک نئی پہل ہے جو وزیر اعظم جناب نریندر مودی کے پالیسی اعلامیہ ’خطے میں سب کے لیے حفاظت اور ترقی (ساگر)‘ کے وسیع تر مقصد کی حمایت کرتی ہے تاکہ سماجی و اقتصادی پہلوؤں کے ساتھ ساتھ زیادہ اہم سائنسی تعامل، خاص طور پر بحر ہند ریم (آئی او آر) ممالک کے درمیان سمندری تحقیق میں قریبی تعاون کو فروغ دیا جاسکے۔ اس پالیسی کے تحت، ڈی آر ڈی او نے ’ میتری(میرین اینڈ الائیڈ انٹر ڈسپلنری ٹریننگ اینڈ ریسرچ انیشی ایٹو)‘ کے نام سے ایک سائنسی جزو شروع کیا، جس میں ’سمندری تحقیق اور ترقی‘کے شعبے میں آئی او آر ممالک کے ساتھ طویل مدتی تعاون قائم کرنے پر توجہ مرکوز کی گئی ہے۔

ساگر میتری پروگرام میں آئی این ایس ساگردھوانی آئی این ایس کستنا کے پٹریوں کا سراغ لگائیں گے، جنہوں نے 1962-65 کے دوران بین الاقوامی بحر ہند مہم میں حصہ لیا تھا۔ مشن کا مقصد عمان، مالدیپ، سری لنکا، تھائی لینڈ، ملائیشیا، سنگاپور، انڈونیشیا اور میانمار کے ساتھ طویل مدتی سائنسی شراکت داری اور تعاون قائم کرنا ہے۔

اس سے قبل ساگر میتری مشن میں وفد نے اپریل 2019 میں ینگون (میانمار) کا دورہ کیا تھا، اس کے بعد اگست 2019 میں کلانگ (ملائیشیا) اور ستمبر 2019 میں سنگاپور کا دوسرا مشن (ایس ایم-2) کیا گیا تھا، جس میں تینوں ممالک میں ایک روزہ سائنسی سیمیناروں کا انعقاد بھی شامل تھا۔ فروری 2020 میں ، این پی او ایل نے تیسرے مشن (ایس ایم -3) کے حصے کے طور پر جنوبی بحر ہند میں سمندری مطالعہ کیا ، جس میں استوائی علاقہ بھی شامل ہے۔

موجودہ مشن (ایس ایم -4) منصوبے میں شمالی بحیرہ عرب میں آئی این ایس ساگردھوانی پر سائنسی تعیناتی اور عمان کی سلطان قابوس یونیورسٹی میں میرین سائنسز اینڈ فشریز ڈیپارٹمنٹ کے ساتھ مشترکہ تحقیقی پروگرام شروع کرنا شامل ہے۔ یہ مشن سائنس دانوں کو سمندروں کا مطالعہ کرنے والے اپنے آئی او آر ہم منصبوں کے ساتھ تعاون کرنے اور مضبوط ورکنگ تعلقات قائم کرنے کا موقع فراہم کرتے ہیں۔

آئی این ایس ساگردھونی ایک سمندری صوتی تحقیقی جہاز ہے جسے این پی او ایل، کوچی نے ڈیزائن اور تیار کیا ہے اور جی آر ایس ای لمیٹڈ کے ذریعہ مقامی طور پر تعمیر کیا گیا ہے۔ اسے جولائی 1994 میں لانچ کیا گیا تھا۔ این پی او ایل سمندری ماحول اور دیگر متعلقہ شعبوں کا مطالعہ کرنے میں شامل ہے۔ یہ بحری جہاز گزشتہ 25 سالوں سے وسیع پیمانے پر سمندری مشاہدے کے مشن اور تحقیق میں مشغول ہے۔

***

(ش ح – ع ا – ع ر)

U. No. 10743



(Release ID: 1967206) Visitor Counter : 74


Read this release in: Marathi , English , Hindi