وزارت دفاع

شاہی  کمبوڈین مسلح افواج  (آر سی اے ایف) کے نائب کمانڈر اِن چیف، شاہی کمبوڈین فوج (آر سی اے) کے کمانڈر لیفٹیننٹ جنرل ہن مانیٹ،بھارت کے تین روزہ دورے پر پہنچ گئے

Posted On: 03 FEB 2023 7:05PM by PIB Delhi

شاہی  کمبوڈین مسلح افواج  (آر سی اے ایف) کے نائب کمانڈر اِن چیف، شاہی کمبوڈین فوج (آر سی اے) کے کمانڈر لیفٹیننٹ     جنرل ہن مانیٹ ایک وفد کے ساتھ 02 سے 04 فروری 2023 تک ہندوستان کا دورہ کر رہے ہیں۔ یہ شاہی کمبوڈین فوج کے کسی بھی کمانڈر کا پہلا دورہ ہے اور دونوں ممالک کے درمیان آرمی ٹو آرمی تعلقات میں ایک سنگ میل ہے۔

3 فروری 2023 کو جنرل آفیسر نے قومی جنگی یادگار پر گلہائے عقیدت پیش کرکے ہندوستانی مسلح افواج کے شہید ہونے والے ہیروز کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے دورے کا آغاز کیا۔ انہوں نے ڈیفنس سکریٹری مسٹر گریدھر ارامانے سے ملاقات کی اور انہیں محکمہ دفاعی پیداوار (ڈی ڈی پی) اور آرمی ڈیزائن بیورو کے ذریعہ ہندوستانی دیسی دفاعی ساز و سامان کی تیاری کے ماحولیاتی نظام کے بارے میں بریفنگ دی گئی۔ بعد میں انہوں نے ہندوستان کے عزت مآب نائب صدر جمہوریہ جناب جگدیپ دھنکڑ، عزت مآب رکشا منتری جناب راج ناتھ سنگھ، وزیر خارجہ ڈاکٹر ایس جے شنکر اور نائب قومی سلامتی مشیر جناب  وکرم مصری سے ملاقات کی۔

بعد میں دن میں دورہ پر آئے جنرل آفیسرکو ساؤتھ بلاک کے لان میں رسمی استقبال اور گارڈ آف آنر دیا گیا جس کے بعد انہوں نے آرمی چیف جنرل منوج پانڈے سے ملاقات کی۔ میٹنگ کے دوران، چیف آف اسٹاف جنرل منوج پانڈے نے شاہی کمبوڈین آرمی کے لیے اپنی مرضی کے مطابق تربیتی ماڈیولز پیش کرتے ہوئے کمبوڈیا کے لیے ہندوستان کی حمایت کی توثیق کی اور لیفٹیننٹ جنرل ہن مانیٹ نے کمبوڈیا میں پہلی آرمی ٹو آرمی اسٹاف بات چیت کے انعقاد کے شیڈول کا اعلان کیا۔ ہندوستانی فوج اپنے اعلیٰ تربیتی اداروں میں مختلف عصری مضامین میں ٹیلر سے بنے کورسز کا انعقاد کرے گی اور ایک تربیتی ٹیم کمبوڈیا میں تعینات کرے گی۔ دونوں سربراہان نے اسٹاف بات چیت کے لیے ‘حوالہ جات کی شرائط ’ پر دستخط کیے اور اپنی مرضی کے مطابق تربیتی فولڈرز کا تبادلہ کیا۔

04 فروری 2023 کو، لیفٹیننٹ جنرل ہن مانیٹ راجپوتانہ رائفلز رجمنٹل سینٹر دہلی کینٹ کا دورہ کرنے والے ہیں، جہاں وہ اگنی ویروں کی تربیت اور دیسی دفاعی آلات کی نمائش کا مشاہدہ کریں گے۔ وہ نئی دہلی سے روانگی سے قبل چیف آف ڈیفنس اسٹاف جنرل انل چوہان سے بھی ملاقات کریں گے۔

ہندوستان اور کمبوڈیا نے صدیوں پرانا ثقافتی، مذہبی اور لوگوں سے لوگوں کو جوڑنے کا اشتراک کیا ہے۔ کمبوڈیا ہندوستان کی ‘ایکٹ ایسٹ’ پالیسی میں کلیدی شراکت دار ہے۔ دفاع اور سلامتی کے شعبوں میں دونوں ممالک کے درمیان خوشگوار تعلقات ہیں۔ دونوں ممالک کے درمیان دفاعی تعاون 2007 میں دستخط کیے گئے دو طرفہ دفاعی تعاون کے معاہدے کے تحت چلتا ہے۔ ہندوستان اور کمبوڈیا کے درمیان فوجی تعلقات ماضی قریب میں پروان چڑھے ہیں اور مختلف شعبوں جیسے تربیتی تعاون، آئی ای ڈی، تخریب کاری مخالف سرگرمی اور اقوام متحدہ کی امن قائم کرنے میں توسیع کا منصوبہ بنایا گیا ہے۔ دونوں افواج کے درمیان دو طرفہ میکانزم کو آرمی ٹو آرمی اسٹاف مذاکرات کے ذریعے ادارہ جاتی شکل دی جا رہی ہے جس سے دونوں ممالک کے درمیان دفاعی تعاون میں اضافہ ہو گا۔

موجودہ دور کی شاہی کمبوڈین مسلح افواج ( آر سی اے ایف) کے ساتھ براہ راست تعلق ہندوستانی بٹالینز (1آسام ریجمنٹ اور 4 جے اے کے رائفل) نے 1991 میں پیرس امن معاہدے کے بعدیو این ٹی اے سی (کمبوڈیا میں یو این ٹرانزیشن اتھارٹی) کے حصے کے طور پر  قائم کیا تھا۔ بھارت کے وزیر دفاع جناب راج ناتھ سنگھ کے جون 2018 اور نومبر 2022 میں کمبوڈیا کے دورہ نے دو طرفہ دفاعی تعاون کو مزید بلندی تک پہنچانے کے لیے نئی تحریک فراہم کی۔

https://static.pib.gov.in/WriteReadData/userfiles/image/IMG-20230203-WA0051F3B4.jpg

https://static.pib.gov.in/WriteReadData/userfiles/image/IMG-20230203-WA005012MH.jpg

https://static.pib.gov.in/WriteReadData/userfiles/image/IMG-20230203-WA00522WCN.jpg

https://static.pib.gov.in/WriteReadData/userfiles/image/IMG-20230203-WA0053F4UI.jpg

********

 

ش ح ۔ ا ک ۔ع ر

U. No.1242



(Release ID: 1896536) Visitor Counter : 115


Read this release in: English , Hindi