زراعت اور کاشتکاروں کی فلاح و بہبود کی وزارت
azadi ka amrit mahotsav g20-india-2023

مرکزی وزیر زراعت جناب تومر نے ای-نام کے تحت پلیٹ فارم آف پلیٹ فارم (پی او پی) کا آغاز کیا، 1018 ایف پی اوز کو 37 کروڑ روپے سے زیادہ کی ایکویٹی گرانٹ جاری کی گئی


ای-نام کافی ٹیبل بک کا اجرا

Posted On: 14 JUL 2022 6:53PM by PIB Delhi

 

زراعت اور کسانوں کی بہبود کے مرکزی وزیر جناب نریندر سنگھ تومر نے آج کرناٹک کے بنگلورو میں ریاستی زراعت اور باغبانی کے وزراء کی کانفرنس کے موقع پر نیشنل ایگریکلچر مارکیٹ (ای-این اے ایم) کے تحت پلیٹ فارم آف پلیٹ فارم (پی او پی) کا آغاز کیا۔ نیز، تقریباً 3.5 لاکھ کسانوں کو فائدہ پہنچانے کے لیے ان کی 1,018 فارمر پروڈیوسر آرگنائزیشنز (FPOs) کو 37 کروڑ روپے سے زیادہ کی ایکویٹی گرانٹ جاری کی گئی۔

اس موقع پر جناب تومر، کرناٹک کے وزیر اعلیٰ جناب بسوراج بومائی، کیمیکل اور کھاد اور صحت و خاندانی بہبود کے مرکزی وزیر ڈاکٹر منسکھ منڈاویہ، زراعت اور کسانوں کی بہبود کی مرکزی وزیر مملکت محترمہ شوبھا کرندلاجے اور جناب کیلاش چودھری، کرناٹک کے وزیر زراعت جناب بی سی پاٹل، ریاستی وزرا، زراعت کے مرکزی سکریٹری جناب منوج اہوجا اور دیگر سینیئر افسران موجود تھے۔

 

 

پی او پی کے متعارف ہونے سے کسان اپنی پیداوار ریاست کی سرحدوں سے باہر فروخت کر سکیں گے۔ اس سے کسانوں کی متعدد منڈیوں، خریداروں، خدمات فراہم کرنے والوں تک ڈجیٹل رسائی میں اضافہ ہوگا اور قیمتوں کی دریافت کے طریقہ کار کو بہتر بنانے اور قیمتوں کے مطابق قیمتوں کی وصولی کے مقصد سے کاروباری لین دین میں شفافیت آئے گی۔ مختلف پلیٹ فارموں سے 41 سروس فراہم کنندگان POP پر محیط ہیں جو مختلف ویلیو چین سروسز جیسے ٹریڈنگ، پرکھ، گودام، فنٹیک، مارکیٹ کی معلومات، نقل و حمل وغیرہ کی سہولت فراہم کرتے ہیں۔ PoP ایک ڈجیٹل ماحولیاتی نظام بنائے گا، جس سے زرعی ویلیو چین کے مختلف حصوں میں مختلف پلیٹ فارموں کی مہارت کا فائدہ ملے گا۔

ای-نام سروس فراہم کرنے والوں کے پلیٹ فارم کو ”پلیٹ فارم آف پلیٹ فارم“ کے طور پر مربوط کرتا ہے جس میں کمپوزٹ سروس فراہم کنندگان (سروس فراہم کرنے والے جو زرعی پیداوار کی تجارت کے لیے مجموعی خدمات فراہم کرتے ہیں بشمول معیار کا تجزیہ، تجارت، ادائیگی کے نظام اور لاجسٹکس)، لاجسٹکس سروس فراہم کرنے والے، کوالٹی ایشورنس۔ سروس فراہم کنندہ، صفائی، درجہ بندی، چھنٹائی اور پیکیجنگ کی سروس فراہم کرنے والے، گودام کی سہولت فراہم کرنے والے، زرعی ان پٹ سروس فراہم کرنے والے، ٹیکنالوجی سے چلنے والا فنانس اور انشورنس سروس فراہم کرنے والے، معلومات کی ترسیل کا پورٹل (مشاورتی خدمات، فصل کی پیشن گوئی، موسم کی تازہ کاری، کسانوں کے لیے صلاحیت کی تعمیر وغیرہ) اور دیگر پلیٹ فارم (ای کامرس، بین الاقوامی ایگری بزنس پلیٹ فارم، بارٹر، پرائیویٹ مارکیٹ پلیٹ فارم وغیرہ) شامل ہیں۔

مختلف سروس فراہم کرنے والوں کی شمولیت سے نہ صرف ای-نام پلیٹ فارم کی قدر میں اضافہ ہوتا ہے بلکہ پلیٹ فارم کے صارفین کو مختلف خدمات فراہم کرنے والوں سے خدمات حاصل کرنے کے اختیارات بھی ملتے ہیں۔ یہ کسانوں، ایف پی اوز، تاجروں اور دیگر اسٹیک ہولڈروں کو ایک ونڈو کے ذریعے زرعی ویلیو چین میں وسیع اقسام کے سامان اور خدمات تک رسائی کے قابل بناتا ہے، اس طرح اسٹیک ہولڈروں کو مزید اختیارات ملتے ہیں۔ مزید برآں، اچھے معیار کے سامان/ سروس فراہم کنندہ کا انتخاب کرتے ہوئے، اس سے اسٹیک ہولڈروں کے وقت اور محنت کی بچت ہوتی ہے۔ POP تک رسائی ای-نام موبائل ایپ کے ذریعے کی جا سکتی ہے جسے Google Play Store سے ڈاؤن لوڈ کیا جا سکتا ہے۔

وزیر زراعت کی طرف سے جاری کی گئی کافی ٹیبل بک اختراعات اور ٹیکنالوجی کے ذریعے ملک میں زرعی مصنوعات کی تجارت میں شفافیت اور کارکردگی لانے کے لیے ای-نام کی کوششوں اور اس کے سفر کو دکھاتی ہے۔ ای-نام پر کافی ٹیبل بک اے پی ایم سی منڈیوں کی ڈجیٹلائزیشن کی سہولت کے ذریعے کسانوں اور اسٹیک ہولڈروں کے فوائد اور کامیابی کو ظاہر کرنے پر توجہ مرکوز کرتی ہے۔

 

                                               **************

ش ح۔ ف ش ع-م ف   

U: 7577



(Release ID: 1841612) Visitor Counter : 145


Read this release in: Hindi , English , Kannada