زراعت اور کاشتکاروں کی فلاح و بہبود کی وزارت
azadi ka amrit mahotsav

اہم فصلوں کی پیداوار کے لیے تیسرا پیشگی تخمینہ 2021-22 جاری کیا گیا

ملک میں 314.51 ملین ٹن غذائی اجناس کی ریکارڈ پیداوار کا تخمینہ لگایا گیا ہے

غذائی اجناس کی پیداوار گزشتہ 5 سالوں کی اوسط پیداوار سے 23.80 ملین ٹن زیادہ رہنے کا اندازہ ہے

چاول، مکئی، دالوں، تیل کے بیج، چنے، ریپ سیڈ اور سرسوں اور گنے کی ریکارڈ پیداوار کا تخمینہ

اتنی فصلوں کی ریکارڈ پیداوار مرکزی حکومت کی کسان دوست پالیسیوں اور کسانوں کی انتھک محنت اور سائنس دانوں کی لگن کا نتیجہ ہے: مرکزی وزیر زراعت

Posted On: 19 MAY 2022 7:58PM by PIB Delhi

نئی دہلی،  19/مئی 2022 ۔ زراعت اور کسانوں کی بہبود کی مرکزی وزارت نے سال 2021-22 کے لیے اہم زرعی فصلوں کی پیداوار کا تیسرا پیشگی تخمینہ جاری کیا ہے۔ ملک میں غذائی اجناس کی پیداوار کا تخمینہ ریکارڈ 314.51 ملین ٹن ہے جو کہ 2020-21 کے دوران غذائی اجناس کی پیداوار سے 3.77 ملین ٹن زیادہ ہے۔ 2021-22 کے دوران پیداوار پچھلے پانچ سالوں (2016-17 سے 2020-21) میں غذائی اجناس کی اوسط پیداوار کے مقابلے میں 23.80 ملین ٹن زیادہ ہے۔ ریکارڈ پیداوار کا یہ تخمینہ چاول، مکئی، دالوں، تلہنوں، چنے، ریپ سیڈ اورسرسوں اور گنے کا ہے۔ زراعت اور کسانوں کی بہبود کے وزیر جناب نریندر سنگھ تومر نے کہا ہے کہ اتنی فصلوں کی یہ ریکارڈ پیداوار وزیر اعظم جناب نریندر مودی کی باصلاحیت قیادت میں مرکزی حکومت کی کسان دوست پالیسیوں اور کسانوں کی انتھک محنت اور سائنس دانوں کی لگن کا نتیجہ ہے۔

مختلف فصلوں کی پیداوار کا اندازہ ریاستوں سے موصول ہونے والے اعداد و شمار پر مبنی ہے اور دوسرے ذرائع سے دستیاب معلومات سے تصدیق شدہ ہے۔ سال 2007-08 اور اس کے بعد کے سالوں کے مقابلے میں سال 2021-22 کے لئے تیسرے پیشگی تخمینے کے مطابق مختلف فصلوں کی تخمینہ پیداوار سے متعلق تفصیلات نیچے منسلک ہے۔

تیسرے پیشگی تخمینہ کے مطابق، 2021-22 کے دوران اہم فصلوں کی تخمینہ پیداوار حسب ذیل ہے:

غذائی اجناس 314.51 ملین ٹن، چاول 129.66 ملین ٹن (ریکارڈ)، گیہوں 106.41 ملین ٹن، غذائی/موٹے اناج 50.70 ملین ٹن، مکئی 33.18 ملین ٹن (ریکارڈ)، دالیں 27.75 ملین ٹن (ریکارڈ)، تور 4.35 ملین ٹن، چنا 13.98 ملین ٹن (ریکارڈ)، تلہن 38.50 ملین ٹن (ریکارڈ)، مونگ پھلی 10.09 ملین ٹن، سویابین 13.83 ملین ٹن، ریپ سیڈ اور سرسوں 11.75 ملین ٹن (ریکارڈ)، گنا 430.50 ملین ٹن (ریکارڈ)، کپاس 31.54 ملین گانٹھیں (ہر ایک 170 کلو گرام)، نوٹ اور میسٹا 10.22 ملین گانٹھیں (ہر ایک 180 کلوگرام)۔

2021-22 کے تیسرے ایڈوانس تخمینے کے مطابق، ملک میں غذائی اجناس کی کل پیداوار کا تخمینہ 314.51 ملین ٹن درج کیا گیا ہے، جو کہ 2020-21 کے دوران غذائی اجناس کی پیداوار سے 3.77 ملین ٹن زیادہ ہے۔ پچھلے پانچ سالوں میں غذائی اجناس کی اوسط پیداوار کے مقابلے میں 23.80 ملین ٹن (2016-17 تا 2020-21) زیادہ ہے۔

2021-22 کے دوران چاول کی کل پیداوار کا تخمینہ 129.66 ملین ٹن ریکارڈ کیا گیا ہے۔ یہ پچھلے پانچ سالوں کی 116.43 ملین ٹن کی اوسط پیداوار سے 13.23 ملین ٹن زیادہ ہے۔

2021-22 کے دوران گیہوں کی پیداوار کا تخمینہ 106.41 ملین ٹن ہے۔ یہ پچھلے پانچ سالوں کی 103.88 ملین ٹن گیہوں کی اوسط پیداوار سے 2.53 ملین ٹن زیادہ ہے۔

غذائی / موٹے اناج کی پیداوار کا تخمینہ 50.70 ملین ٹن لگایا گیا ہے، جو کہ گزشتہ پانچ سالوں کی اوسط پیداوار 46.57 ملین ٹن سے 4.12 ملین ٹن زیادہ ہے۔

2021-22 کے دوران دالوں کی کل پیداوار کا تخمینہ 27.75 ملین ٹن لگایا گیا ہے جو کہ گزشتہ پانچ سالوں کی اوسط پیداوار 23.82 ملین ٹن سے 3.92 ملین ٹن زیادہ ہے۔

2021-22 کے دوران ملک میں تلہن کی کل پیداوار کا تخمینہ 38.50 ملین ٹن لگایا گیا ہے جو کہ 2020-21 کے دوران 35.95 ملین ٹن کی پیداوار سے 2.55 ملین ٹن زیادہ ہے۔ مزید یہ کہ 2021-22 کے دوران تلہن کی پیداوار، تلہن کی اوسط پیداوار سے 5.81 ملین ٹن زیادہ ہے۔

2021-22 کے دوران ملک میں گنے کی کل پیداوار کا تخمینہ 430.50 ملین ٹن لگایا گیا ہے، جو گنے کی اوسط پیداوار 373.46 ملین ٹن سے 57.04 ملین ٹن زیادہ ہے۔

کپاس اور جوٹ اینڈ میسٹائیز کی پیداوار کا تخمینہ بالترتیب 31.54 ملین گانٹھیں (ہر ایک 170 کلوگرام) اور 10.22 ملین گانٹھیں (ہر 180 کلوگرام) ہے۔

سال 2021-22 کے لئے اہم فصلوں کی پیداوار سے متعلق تیسرے پیشگی تخمینے کی تفصیلات کے لئے یہاں کلک کریں

******

ش ح۔ م م۔ م ر

U-NO.5551



(Release ID: 1826810) Visitor Counter : 47


Read this release in: Hindi , Marathi , English