دیہی ترقیات کی وزارت

دین دیال اپادھیائے گرامین کوشل یوجنا (ڈی ڈی یو – جے کے وائی)کے یوم تاسیس کو ‘‘کوشل سے کل بدلیں گے’’ پروگرام کے طور پر منایا گیا


دیہی ترقیات کے مرکزی وزیر جناب نریندر سنگھ تومر نے ڈی ڈی یو- جی کے وائی کے تحت 10.51 لاکھ دیہی نوجوانوں کو ٹریننگ اور 6.6 لاکھ نوجوانوں کو روزگار فراہم دیے جانے کی ستائش کی

Posted On: 25 SEP 2020 10:06PM by PIB Delhi

دیہی ترقیات کی وزارت، حکومت ہند نے آج انتودے دیوس کے موقع پر دین دیال اپادھیائے گرامین کوشل یوجنا (ڈی ڈی یو- جی کے وائی) کا یوم تاسیس منایا۔ اس موقع پر ،دیہی ترقیات، زراعت اور کسانوں کی فلاح وبہبود ، پنچایتی راج اور خوراک کی ڈبہ بندی کی صنعتوں کے مرکزی وزیر جناب نریندر سنگھ تومر، دیہی ترقیات کی مرکزی وزیر مملکت سادھوی نرنجن جیوتی کے ہمراہ موجود تھے۔

جناب نریندر سنگھ تومر نے انتودے دیوس کے موقع پر پروگرام کے دوران ایک بنچ مارک قائم کرنے کیلئے ڈی ڈی یو – جی کے وائی کے تمام شراکت داروں کو مبارکباد دی۔ انہوں نے دیہی نوجوانوں کو ہنرمند بننے کیلئے تحریک دیتے ہوئے کہا ‘‘کوئی بھی ڈگری نوکری نہیں دے سکتی ہے اگر نوجوان ہنرمند نہیں ہے، صرف ہنرمندی ہی بہتر مستقبل بناسکتی ہے’’۔ انہوں نے خودروزگار کی اہمیت پر بھی روشنی ڈالی اور نوجوانوں سے اپیل کی کہ وہ اپنے خود کے مستقبل کا معمار بنیں۔ وزیر موصوف نے خوشی ظاہر کی کہ اس اسکیم کے ذریعے اب تک 10.51 لاکھ نوجوانوں کو تربیت فراہم کرکے 6.6 لاکھ نوجوانوں کو کامیابی کے ساتھ روزگار سے جوڑا گیا ہے۔  انہوں نے ہندوستان کو ایک مستحکم ملک بنانے میں ہنرمندی کے فروغ کی اہمیت پر بھی اظہار خیال کیا۔

http://static.pib.gov.in/WriteReadData/userfiles/image/image001AYRB.png

اس موقع پر وزیر موصوف نے زرعی صنعتی کاری پروگرام کا افتتاح کیا  اور اس پروگرام کے دوران درج ذیل امور کا اجراء کیا:

  1. ڈی ڈی یو- جی کے وائی کے تحت کیپٹیوروزگار کے رہنما اصول۔
  2. مربوط زرعی کلسٹر (آئی ایف سی) کے فروغ کیلئے رہنما خطوط۔
  3. ڈی ڈی یو – جی کے وائی کے تحت پلیسمنٹ پانے والے امیدواروں کی کامیابی کی کہانی کا جامع خلاصہ۔

اس موقع پر زرعی پیداوار کرنے والی تنظیموں (ایف پی او) / اسٹارٹ اپ کی صلاحیت سازی اور دیہی علاقوں میں انکیوبیشن کے سلسلے میں تعاون فراہم کرنے کیلئے دیہی ترقیات کی وزارت اور آئی سی اے آر (کے وی کے) اور آر سی آر سی (غیرسرکاری تنظیموں کا اتحاد) کے درمیان ایک مفاہمت نامے پر بھی دستخط کیے گئے۔

دیہی ترقیات کی مرکزی وزیر مملکت سادھوی نرنجن جیوتی نے ‘‘کوشل سے کل بدلیں گے’’ پروگرام کے انعقاد کیلئے سبھی شراکت داروں کو مبارکباد دی۔ انہوں نے کہا کہ کامیاب امیدواروں کی کہانی مشترک کرنے سے دیگر دیہی نوجوان بھی اس پروگرام میں شامل ہونے کیلئے حوصلہ پائیں گے۔ انہوں نے کوشل کے ذریعے آتم نربھر بھارت کے سلسلے میں دیہی ترقیات کی اہمیت کا بھی ذکر کیا۔انہوں نے سبھی شراکت داروں کو مشورہ دیا کہ وہ دیگر خواہشمند دیہی نوجوانوں کو ڈی ڈی یو- جی کے وائی سے جوڑیں اور سماج میں ایک تبدیلی لانے کی  کامیاب کوشش کریں۔

مرکزی وزراء نے چار الگ الگ مقامات یعنی کوئمبٹور ، بنگلورو، گروگرام اور حیدر آباد کے کچھ روزگار پانے والے امیدواروں اور آجر کمپنیوں کے ساتھ آن لائن گفتگو کی۔ جو امیدوار ہنرمند ہوگئے اور اب کامیابی کے ساتھ مختلف تقرریوں کے ساتھ پلیسڈ ہیں، انہوں نے اپنی زندگی کے تجربات کو گفتگو کے دوران ساجھا کیا۔

جناب ناگیندر ناتھ سنہا، سکریٹری (دیہی ترقیات) نے پروگرام کے نفاذ کے پچھلے چھ برسوں کےدوران ڈی ڈی یو – جی کے وائی کی حصولیابیوں پر روشنی ڈالی۔ انہوں نے ملک بھر میں دیہی ترقیات کیلئے ڈی ڈی یو – جی کے وائی اور مربوط زرعی پہل کی اہمیت کے بارے میں بھی بات کی۔ انہیں پوری امید تھی کہ ڈی ڈی یو – جی کے وائی آنے والے وقت میں دیہی نوجوانوں کو ہنرفراہم کرنے اور انہیں آگے بڑھانے میں بڑی کامیابی حاصل کرے گی۔

اس پروگرام میں ملک بھر کے ریاستی کوشل مشن ، ریاستی دیہی روزی روٹی مشن، ریاستوں/ مرکز کے زیر انتظام علاقوں کے محکمہ برائے دیہی ترقیات، پروجیکٹ تنفیضی ایجنسیوں، آجروں اور دیہی نوجوانوں نے ورچوول طریقے  سے حصہ لیا۔

 

 

 

-----------------------

م ن۔م ع۔ ع ن

U NO: 5880



(Release ID: 1659264) Visitor Counter : 78


Read this release in: English , Hindi , Punjabi