وزارتِ تعلیم

مرکزی وزیر تعلیم نے مجموعی  ترقی کے لئے ’قومی تعلیمی پالیسی:مسائل ، چیلنجز، مستقبل کی راہ‘ پر مرکوز ویبنار سے خطاب کیا

Posted On: 27 NOV 2020 7:21PM by PIB Delhi

نئی دہلی،27نومبر 2020/مرکزی وزیر تعلیم جناب ر میش پوکھریال نے  جامع ترقی  کے لئے ’قومی تعلیمی پالیسی:مسائل، چیلنججز، مستقبل کی راہ موضوع پر مرکوز ایک ویبنار سے آج خطاب کیا۔  یہ ویبنار  یونیورسٹی  گرانٹ کمیشن  (یو جی سی)کے  فروغ انسانی  وسائل  ، مرکز ، ایچ آر ڈی سی، جواہر لعل نہرو یونیورسٹی  (جے این یو)  کے ذریعہ   ریسرچ  فار ریسرجرز فاؤنڈیشن (آر ایف ایف)  کے تعاون  سے  منعقد کیا گیا ۔ ملک اور  بیرون ملک سے 125 اشخاص نے  اس ویبنار میں   شرکت کی۔ جے این یو  کے  فیس بک آفیشئل پیج کے ذریعہ   پروگرام کی   لائیو اسٹریمنگ سے 7000  سے زیادہ   افراد نے  اسے دیکھا اور سنا۔

اس موقع پر  اپنے خطاب میں  جناب پوکھریال نے کہا کہ  نئی قومی  تعلیمی  پالیسی   دنیا کی ان  کچھ چنندہ   پالیسیوں میں  سے ایک ہے جس پر بہت زیادہ تفصیلی  اور گہرے طریقے سے  غور و خوض کیا گیا ہے۔  انہوں نے کہاکہ قومی تعلیمی پالیسی   طلبا کو مکمل تعلیم فراہم کر ان کے کردار کو وضع کرنے پر  مرکوز کی گئی ہے۔ مرکزی وزیر تعلیم نے  کہا کہ  یہ پالیسی   یقینی طور سے  ملک کے اندر ہی عالمی پیمانے کی ریسرچ سہولیات  اور مواقع  مہیا کرکے  ’ہندستان میں مطالعہ‘ اور ’ہندستان میں رہائش‘ کی سوامی وویکا نند کے تصور کو حقیقت میں بدلنے مدد کرے گی۔ انہوں نے کہا کہ تعلیمی پالیسی کی ایک خصوصی خوبی  دنیا میں ’واسودیو کٹمب کم ‘   کے جذبے کو بڑھاوا دینا ہے۔ جناب پوکھریال نے  مادری زبان میں  تعلیم دیئے جانے  پر زور دیتے ہوئے کہا کہ  تعلیم کو   جمہوری بنانے کے لئے  یہ ضروری ہے۔  انہوں نے گاندھی جی کے  الفاظ کو یاد کرتے ہوئے  کہاکہ ہر گاؤں ایک جمہوریہ ہے اور ان تک تعلیم کی روشنی  پہنچنا چاہئے۔

قومی تعلیمی پالیسی 2020 کی مسودہ کمیٹی کے  سربراہ   پروفیسر کے کستوری  رنگن نے  قومی تعلیمی پالیسی کے  خاکے، اس کی اہمیت   اور مخصوص خوبیوں کو اجاگر کیا۔ انہوں نے یہ بھی بتایا کہ  کس طرح سے سخت محنت وقف کرکے  اور یکجوئی کے ساتھ نئی  تعلیمی پالیسی  تمام اسٹاک ہولڈروں سے مختلف پہلوؤں پر    تفصیلی اور  گہرے غوروخوض  کے بعد تیار کیا گیا۔ پروفیسر کستوری رنگن نے  کہا کہ    قومی تعلیمی پالیسی ہندستان میں   اس کی آبادی کی شکل میں  دستیاب  نفع بخش  وسائل  کا  کیپٹلائزیشن کرکے چوتھے  صنعتی انقلاب میں اہم کردار نبھائے گی۔  انہوں نے یہ بھی بتایا کہ  اس طرح سے  قومی تعلیمی پالیسی میں   مستقبل کے لئے تعلیم کا تصور سمایا ہوا ہے جو کہ  ہمارے قومی اہداف کو  مسلسل ترقی کے   نشانے کے ساتھ  جوڑنے میں  مدد گار بنے گی۔

جے این یو کے وائس چانسلر پروفیسر ایم جگدیش  کمار نے کہاکہ    نئی قومی  تعلیمی پالیسی 2020 ہندستان کی آزادی کے بعد  اپنی طرح کی یہ  پہلی پالیسی ہے۔   انہوں نے کہا کہ   جے این یو  قومی تعلیمی پالیسی کے   نفاذ اور اعلی تعلیم کے  دیگروسائل کے سامنے   مثال پیش  کرکے قیادت کرنے کو  تیار ہے۔   پروفیسر جگدیش کمار نے بتایاکہ جے این یو کے    ماہرین تعلیم کے  مختلف  تحریروں کو  کتاب کی شکل میں جلد ہی  فراہم کرایا جائے گا  اور یہ  قومی تعلیمی پالیسی   2020 کے سلسلہ میں  بیداری لانے میں  مدد گا ر ہوگی۔

پروفیسر  جینت ترپاٹھی نے مہمان خصوصی، جے این یو  کے  وائس چانسلر اور  اس تقریب کے اہتمام کو کامیابی سے  چلانے میں  تعاون دینے والی کمیٹی کے   تمام ممبران کے تئیں شکریہ کا اظہار کیا۔

 

م ن۔ ش ت۔ج

Uno-7647

 



(Release ID: 1676731) Visitor Counter : 78


Read this release in: English , Hindi